Category Archives: کل کی بات

Feed Subscription

میری گردن شرم سے کیوں نہیں جھکی ہوئی ؟ 15-10-2010

گردنیں غرور سے اکڑ بھی جایا کرتی ہیں۔ اور گردنیں شرم سے جھکتی بھی ہیں۔ آج غرور سے اکڑی ہوئی گردنوں کی کوئی کمی نہیں۔ ...

مزید پڑھیں »

جنرل کیانی جمہوریت عدلیہ اور تاریخ کا کباڑخانہ 13-10-2010

میرے خیال میں ملک کے اندر کوئی بھی ذی شعور ایسا نہیں جو یہ نہ چاہتا ہو کہ پاکستان میں جمہوریت کا چراغ جلتا رہے۔ ...

مزید پڑھیں »

میرے بھائیو اب تو پاکستان کو توڑنے کی بات کرنا بند کردو ! 12-10-2010

کالا با غ ڈیم کے منصوبے کے خلاف جو آوازیں بلند ہورہی ہیں وہ ایسے لوگوں کی ہیں جنہیں اب تک یقین نہیں کہ پاکستان ...

مزید پڑھیں »

طالع آزماﺅں کی حکمران مثلث 11-10-2010

اس بات میں شک و شبہ کی کوئی گنجائش نہیں کہ آج کے پاکستان پر طالع آزماﺅں کی ایک مثلث حکمران ہے۔ ماضی میں (Troika ...

مزید پڑھیں »

دشمنوں کے بدارادوں کو خاک میں ملانے کا واحد طریقہ 05-10-2010

صدر زرداری کے اس بیان کو قابل ستائش قرار نہ دیناانتہا درجے جانبداری اور زیادتی ہوگی کہ وہ ملک سے دہشت گردی کا خاتمہ کئے ...

مزید پڑھیں »

جسٹس چوہدری صدرزرداری کے محسن ہیں 01-10-2010

میری حقیر رائے میں ذوالفقار علی بھٹو اور بے نظیر بھٹو شہید کی پاکستان پیپلزپارٹی اس قوم کے لئے صدر آصف علی زرداری کی صدارت ...

مزید پڑھیں »

چار دانشور جو صحافی بھی ہیں اور وکیل بھی 30-09-2010

حکومت کے جو وکلاءاس کی جنگ عدالتوں میں لڑ رہے ہیں انہیں کس قدر کامیابی حاصل ہورہی ہے اس کا علم آپ سب کو ہوگا۔ ...

مزید پڑھیں »

بخدمت جناب میاںنوازشریف 29-09-2010

کبھی کبھی میرا جی چاہتا ہے کہ میاں نوازشریف کو ایک کھلا خط لکھوں اور ان سے پوچھوں کہ انہوں نے ماضی سے سبق حاصل ...

مزید پڑھیں »

جو شخص اپنے جرم کا اقرار کررہا ہو کیا اس کے ہاتھ میں قوم کی تقدیر رکھی جاسکتی ہے ؟ 24-09-2010

ایسا کوئی شخص جسے پاکستان کے وسائل اور اس کے عوام کے مقدر کے بارے میں بالواسطہ یا بلاواسطہ طور پر فیصلے کرنے کا اختیار ...

مزید پڑھیں »

ہر موت شہادت نہیںہوا کرتی 21-09-2010

پاکستان پیپلزپارٹی کے کچھ رہنما روایتی طور پر یا عادتاً ان شہادتوں کاذکر بڑے جوش و خروش کے ساتھ کیاکرتے ہیں جو ان کے بقول ...

مزید پڑھیں »
Scroll To Top