ڈاکٹرز اور طبی عملے کو ترجیحی بنیادوں پر حفاظتی سامان فراہم کریں گے، عمران خان

کرونا جیسی وبا کے خلاف ڈاکٹر اور میڈیکل اسٹاف ہراول دستہ ہے، کورونا وائرس کی صورتحال کے تناظر میں ملک میں معاشی سرگرمیوں کو رواں رکھنے خصوصا غریب عوام کو ریلیف دینے کے لیے اقدامات کیے جائیں

اسلام آباد(الاخبار نیوز) وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ڈاکٹرز اور طبی عملے کو ہر حال میں ترجیحی بنیادوں پر سامان دیا جائے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت کرونا سے متعلق جائزہ اجلاس ہوا جس میں چیئرمین این ڈی ایم اے نے بریفنگ کے دوران بتایا کہ ملک میں 136 اسپتالوں میں 3300 وینٹی لیٹرز د ستیاب ہیں۔چیئرمین این ڈی ایم اے نے بریفنگ کے دوان بتایا کہ طبی عملے کے لیے حفاظتی کٹس کی بروقت فراہمی یقینی بنائی جا رہی ہے،این ڈی ایم اے نے اسپتالوں کی انتظامیہ سے رابطہ استوار کرلیا ہے۔وزیراعظم کو بتایا گیا کہ 49 ہزار500 حفاظتی کٹس پہلے ہی اسپتالوں میں فراہم کی جا چکی ہیں،اسپتالوں کو کٹس کی فراہمی آئندہ ایک دو روزمیں مکمل کی جائےگی،این ڈی ایم اے کے پاس حفاظتی کٹس اور ماسکس کی کمی نہیں ہے۔چیئرمین این ڈی ایم اے کا کہنا تھا کہ ہدف مطلوبہ تعداد میں وینٹی لیٹرز کی دستیابی یقینی بنانا ہے،وینٹی لیٹرز کے لیے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات جاری ہیں، روزانہ کی بنیاد پر ٹیسٹ کی استعداد میں اضافے پر توجہ دی جا رہی ہے۔اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ کرونا جیسی وبا کے خلاف ڈاکٹر اور میڈیکل اسٹاف ہراول دستہ ہے،ڈاکٹرز اور طبی عملے کو ہرحال میں ترجیحی بنیادوں پر سامان دیاجائے۔ کورونا وائرس کی صورتحال کے تناظر میں ملک میں معاشی سرگرمیوں کو رواں رکھنے اور خصوصا غریب عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے اقدامات کیے جائیںوزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ تعمیراتی شعبے کی بحالی کے ثمرات مزدوروں تک پہنچنے چاہئیں،پبلک سیکٹر ڈویلپمنٹ پروگرام کے فنڈز کا استعمال ان منصوبوں پر کیا جائے۔

You might also like More from author