کوئٹہ خود کش حملہ،8افراد جاں بحق، متعدد زخمی

 واقعہ پریس کلب کے قریب شارع اقبال پر پیش آیا، دھماکے کی شدت کے باعث قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے ،آس پاس کھڑی کئی گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا 

کوئٹہ(الاخبار نیوز+صباح نیوز) پریس کلب کے قریب شارع اقبال پر خودکش حملے کے نتیجے میں 8 افراد جاں بحق اور 19 زخمی ہوگئے۔ نجی ٹی وی کے مطابق کوئٹہ میں پریس کلب کے قریب شارع اقبال پر خودکش حملے کے نتیجے میں 8 افراد جاں بحق جب کہ 19 زخمی ہوگئے، واقعہ کے بعد امدادی ٹیموں نے زخمیوں کو فوراً قریبی اسپتال منتقل کیا، ترجمان سول اسپتال نے دھماکے میں 8 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ زخمیوں میں مزید افراد کی حالت تشویشناک ہے جب کہ سول اسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔پولیس کے مطابق دھماکے کی شدت کے باعث قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے اور آس پاس کھڑی کئی گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا ہے جب کہ دھماکے کے بعد سیکورٹی فورسز اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے علاقے کو گھیرے میں لیکر شواہد اکھٹے کرنا شروع کردیے ہیں۔ڈی آئی جی کوئٹہ عبدالرزاق چیمہ نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ شارع اقبال پر ہونے والا دھماکا خودکش تھا جو ریلی میں ہوا، ریلی کے شرکاء کو سیکورٹی دی گئی تھی اور علاقہ بند کیا تھا، ایک کم عمر نوجوان پیدل آیا جسے پولیس نے روکا تاہم روکے جانے پر نوجوان نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔ڈی آئی جی کوئٹہ نے کہا کہ پولیس کے جوانوں نے جان پر کھیل کر مبینہ خودکش حملے کو روکنے کی کوشش کی، شہدائ کی تعداد 8 ہے جن میں 2 پولیس اور ایک لیویز اہلکار بھی شامل ہے۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال نے کوئٹہ میں بم دھماکے کی مذمت کی اور قیمتی جانی نقصان پر اظہار افسوس کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گرد سخت ترین سزا کے مستحق ہیں جب کہ شہر کی سیکیورٹی کو مزید موثر بنایا جائے۔ صوبائی وزیر داخلہ ضیائ لانگو نے دھماکے کی مذمت کی اور جانی نقصان پر اظہار افسوس کیا۔ دریں اثناءصدر ڈاکٹر عار ف علوی ،وزیراعظم عمران خان،چیرمین ڈپٹی چیرمین سینٹ ، اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف اور وزیراعلی پنجاب سمیت اہم رہنماوں نے کوئٹہ دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کی ہے۔صدر ڈاکٹرعارف علوی نے کوئٹہ دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر افسوس ظاہرکرتے ہوئے لواحقین سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے زخمی ہونے والوں کی جلد صحت یابی کے لئے دعا کی ہے،وزیراعظم عمران خان نے کوئٹہ دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے دہشتگردی واقعے میں شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں اور شہریوں کے درجات کی بلندی کیلئے دعا کی اور ہدایت جاری کی کہ زخمیوں کو بہترین طبی امداد کی فراہمی یقینی بنائی جائے ؟چیئرمین سینٹ محمد صادق سنجرانی سمیت ڈپٹی چیرمین،قائدایوان وحزب اختلاف نے کوئٹہ میں ہونے والے دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دہشت گرد ملک کے امن و امان کو سبوتاژ کر کے اپنے مذمو م مقاصد میں کامیاب نہیں ہو سکتے ۔ انہوں نے دھماکے کو دہشت گردوں کی بزدلانہ کارروائی اور شکست خوردہ ذہنیت قرار دیا ۔چیئرمین سینیٹ نے دھماکے کے نتیجے میںمتعدد جاں بحق افراد کے پسماندگان سے اظہار تعزیت کیا اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کرتے ہوئے انہیں بہتر طبی امداد دینے کی متعلقہ اداروں کو ہدایت کی۔ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سینیٹر سلیم مانڈوی والا ، سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر سید شبلی فراز ،سینیٹ میں قائد حزب اختلاف سینیٹرراجہ محمد ظفرالحق نے بھی کوئٹہ میں ہونے والے دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے مرحومین کی دعائے مغفرت اور زخمیوں کےلئے جلد صحت یابی کی دعا کی ۔ وزیراعلی پنجاب سردار عثمان بزدار نے بھی دھماکے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شہدا کے لواحقین سے دلی ہمدردی ہے۔ انہوں نے زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی اور کہا کہ ملک دشمن عناصر کی بزدلانہ کارروائیاں پرعزم قوم کے حوصلے پست نہیں کر سکتیں۔ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں شہدا کی عظیم قرنیاں رائیگاں نہیں جانے دیں گے۔ قوم دہشتگردی اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لئے پرعزم اور یکسو ہے۔جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے شہیدوں کے بلند درجات کیلئے دعائے مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی اور کہا کہ وہ لواحقین کے غم میں برابر کے شریک ہیں۔ بلوچستان حکومت امن وامان برقرار رکھنے میں ناکام ہو چکی ہے۔ حکومت ذمہ داوں کے خلاف کارروائی کرکے حقائق عوام کے سامنے لائے۔وزیر داخلہ اعجاز احمد شاہ نے اپنے بیان میں واقعے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ شرپسند عناصر کو ان کے ناپاک عزائم میں کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔ اس طرح کے بزدلانہ واقعات سے لوگوں میں خوف وہراس پھیلانے والے ناکام ہوں گے۔ جاں بحق ہونے والے افراد اور ان کے لواحقین کے لئے دعاگو ہیں۔ اس دھماکے میں ملوث افراد کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔پاکستان مسلم لیگ (ن)کے صدر اور قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے بھی دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ انھیں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر دلی رنج اور افسوس ہے۔ دہشت گردی کے واقعات کو سنجیدگی سے لینا ہوگا۔ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کے حوالے سے حکومت ذمہ داریوں کا تعین کرے۔ متاثرہ خاندانوں کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں۔ اللہ تعالی شہدا کو جنت الفردوس میں اعلی مقام اور لواحقین کو صبر جمیل دے ،امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے بھی کوئٹہ دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے قیمتی جانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کیا ہے اپنے بیان میں انہوں نے دھماکے میں جاں بحق ہونے والوں کے دعائے مغفرت اور لواحقین کےلئے صبرو جمیل کی دعا کی ہے جبکہ زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لئے دعا کی ہے ۔

You might also like More from author