کشمیر جدوجدہ میں تنہا نہیں، پاکستانی قوم انکے ساتھ کھڑی ہے، عثمان بزدار

  • مقبوضہ وادی کے نہتے عوام بنےادی حق سے محروم ہیں، حق خودارادیت کے حصول کیلئے انکی دلیرانہ جدوجہد کو سلام پیش کرتا ہوں
  • سیاسی قوتوں کو بالغ نظری اور دور اندیشی کا مظاہرہ کرنے کی ضرورت ہے، ترقی کے سفر کو افراتفری کی سیاست کی نذر کرنا دانشمندی نہیں


لاہور( این این آئی)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے وزیراعلیٰ آفس میں مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے اراکین قومی و صوبائی اسمبلی نے ملاقات کی۔ اراکین اسمبلی نے اپنے حلقوں کے مسائل سے وزیراعلیٰ کو آگاہ کیا۔ وزیراعلیٰ نے مسائل کے حل کی یقین دہانی کرائی۔ ملاقات میں ترقیاتی منصوبوں اور فلاح عامہ کے پروگرام کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایک ایک لمحہ قیمتی ہے، انتشار کی سیاست (باقی صفحہ7 بقیہ نمبر17
میں وقت ضائع کرنا ملک و قوم سے زیادتی ہے۔ سیاسی قوتوں کو موجودہ حالات میں بالغ نظری اور دور اندیشی کا مظاہرہ کرنے کی ضرورت ہے۔ ترقی کے سفر کو افراتفری کی سیاست کی نذر کرنا دانشمندی نہیں اور منفی سیاست کرنے والوں کو جوش کی بجائے ہوش کا دامن تھامنا چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ تبدیلی سے خوف زدہ عناصر صرف تنقید برائے تنقید کر رہے ہیں۔ تنقید کی پرواہ نہیں، عوامی خدمت کا سفر جاری رہے گا اور پاکستان میں صرف عوام کی خوشحالی کی سیاست ہوگی۔ 22 کروڑ عوام کبھی بھی ایسے عناصر کا ساتھ نہیں دیں گے جو ذاتی مفادات کی خاطر ملک میں عدم استحکام پھیلانا چاہتے ہیں۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ اراکین اسمبلی عوام سے رابطے مزید بڑھائیں اور ان کے مسائل کے حل کیلئے کوئی کسر اٹھا نہ رکھیں۔ وزیراعلیٰ سے ملاقات کرنے والو ںمیں مہر غلام محمد لالی،روبینہ جمیل، فوزیہ بہرام، فرخ الطاف، بریگیڈیئر (ر) راحت امان اللہ بھٹی، کرامت کھوکھر، مامون تارڑ، پاکپتن سے پاکستان تحریک انصاف کے ٹکٹ ہولڈر محمد شاہ کھگہ اور دیگر شامل تھے۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت آج و زےراعلیٰ آفس مےں اجلاس منعقد ہوا ،جس مےں صوبے کے عوام کو صحت کی معےاری سہولتوں کی فراہمی کےلئے اصلاحاتی پروگرام پر پےش رفت کا جائزہ لےاگےا۔اجلاس مےں ڈاکٹروں کی ہڑتال کے حوالے سے بھی آئندہ کے لائحہ عمل پر غور کےاگےا۔وزےراعلیٰ نے لاہور کے بڑے ہسپتالوں کی او پی ڈیز،ایمرجنسیز اور ان ڈور وارڈزمےںہےلتھ کےئر کی سہولتوں کو بہتر بنانے کے کام کو تےزکرنے کی ہداےت کرتے ہوئے کہا کہ صوبے مےں مرےضوں کو معےاری ہےلتھ کےئر کی سہولتےں فراہم کرنا ہمارا مشن ہے ۔مرےضوںکومعےاری علاج معالجہ فراہم کرنے کےلئے ہرممکن وسائل فراہم کرےںگے۔انہوںنے کہا کہ صوبے کی تارےخ مےں پہلی بار پانچ مدر اےنڈ چائلڈ ہےلتھ کےئر ہسپتال بنائے جارہے ہےں ۔ےہ ہسپتال اٹک،بہاولنگر،مےانوالی، لےہ اورراجن پور مےں بنائے جائےںگے۔بڑے ہسپتالوں مےں بھی صحت کی سہولتےں بہتر بنانے کےلئے تےزی سے کام جاری ہے۔ انہوںنے کہا کہ ڈاکٹروں کی جانب سے احتجاج کا کوئی جواز نہےں۔ہسپتالوں مےں آئے مرےضوں کو نہ دےکھنا ڈاکٹروں کے نوبل پروفےشن کے عہد کے منافی ہے ۔انہوںنے کہا کہ ےہ روےہ ڈاکٹروں کو زےب نہےں دےتا ۔احتجاج کے باعث سب سے زےادہ مشکل مرےضوں اوران کے تےمارداروں کو ہوتی ہے ۔انہوںنے کہا کہ مذاکرات کےلئے کمےٹی تشکےل دی لےکن افسوس کا امر ہے کہ ڈاکٹر بات چےت کی جانب نہےں آئے۔حکومت کی ہر ممکن کوشش ہے کہ معاملہ افہام و تفہےم سے حل کےاجائے۔وزےراعلیٰ کو ہسپتالوں مےں طبی سہولتوں کی بہتری کے پروگرام پر پےش رفت کے بارے مےں برےفنگ دی گئی۔ صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد، چیف سیکرٹری،سیکرٹری مواصلات و تعمیرات، سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ اینڈ میڈیکل ایجوکیشن، سپےشل سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ اور متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے وزےراعلیٰ آفس مےں صوبائی وزےر صحت ڈاکٹر ےاسمےن راشد نے ملاقات کی ۔ڈاکٹر ےاسمےن راشد نے وزےراعلیٰ کو محمد نوازشرےف کی صحت کے بارے مےں تازہ صورتحال سے آگاہ کےا۔صوبائی وزےر صحت نے وزےراعلیٰ کو محمد نوازشرےف کے ہسپتال مےں علاج معالجے کےلئے کےے جانےوالے اقدامات کے بارے مےں برےفنگ دی۔صوبائی وزےر صحت نے کہا کہ ٹےسٹوں کے نتائج کے مطابق طبی بورڈ کی مشاورت سے نوازشرےف کو ادوےات دی جارہی ہےں ۔وزےراعلیٰ نے نوازشرےف کو ہر ممکن طبی سہولت جاری رکھنے کی ہداےت کرتے ہوئے کہا کہ محمد نوازشرےف کے علاج معالجے کےلئے تمام ترممکنہ اقدامات کےے جارہے ہےں ۔دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ محمد نوازشرےف کوجلدصحت کاملہ عطا فرمائے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی جارحیت کے خلاف یوم سیا ہ کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت بدل کر مودی سرکار نے تمام اخلاقی، سفارتی اور سیاسی قوانین کو پامال کیا ہے۔ بھارت نے مقبوضہ کشمیر کے لاکھوں افراد کو کرفیو کی پابندیوں میں جکڑ رکھا ہے۔ بندوق کی نوک پر کشمےری عوام کے حق خودارادیت کی جائز جدوجہد کو دباےا نہےں جاسکتا۔ مقبوضہ کشمےر مےں بھارت کی رےاستی دہشت گردی کے باوجود کشمےرےوں کا جذبہ حرےت کمزور نہےں پڑ ا۔ غاصبانہ قبضہ کے ذریعے کشمیری عوام کو حق خودارادیت سے محروم رکھناانسانی حقوق کی صرےحاً خلاف ورزی ہے۔ بھارتی سرکار گولیوں کے ذریعے کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو نہیں کچل سکتی۔ کشمیری جوان اپنے لہو سے آزادی کی شمع روشن کئے ہوئے ہیں۔ پاکستان کی حکومت اور عوام کشمیریوں کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑے ہیں۔ پاکستان اور کشمیر جدا جدا نہیں۔ ہمارے دل ایک ساتھ دھڑکتے ہیں۔ عالمی برادری کو بھارت پرمقبوضہ کشمیر میں آگ اور خون کا کھیل بند کرنے کیلئے دباﺅ ڈالنا چاہیئے۔ حق خودارادےت بےن الاقوامی قانون کا اےک غےر متنازعہ جز ہے۔ افسوس ناک امر ہے کہ کشمےر کے نہتے عوام اپنے اس بنےادی حق سے محروم ہیں۔ حق خودارادیت کے حصول کیلئے کشمیری عوام کی دلیرانہ جدوجہد کو سلام پیش کرتا ہوں۔ آج کے دن کشمیری عوام کو باورکرانا ہے کہ وہ اپنی جدوجہد میں تنہا نہیں بلکہ پاکستانی قوم ان کے ساتھ کھڑی ہے۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے معروف شاعر و نعت خواں اعجاز رحمانی کے انتقال پر گہرے دکھ اور افسو س کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اپنے تعزیتی پیغام میں سوگوار خاندان سے دلی ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے دعا کی کہ اللہ تعالیٰ مرحوم کی روح کو جوار رحمت میں جگہ دے اور غمزدہ خاندان کو صبر جمیل عطا فرمائے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ اعجاز رحمانی نعت خوانی میں اپنا ثانی نہیں رکھتے تھے۔ انہوں نے اپنے منفرد انداز سے نعت خوانی کو آگے بڑھایا۔

You might also like More from author