اقوام متحدہ کمیشن بنا کر بھارتی مظالم کی تحقیقات کرائے، عمران خان

  • بین الاقوامی ادارے کا مقبوضہ کشمیر میں 6 ہفتے سے جاری کرفیو پر تشویش کا اظہار خوش آئند ہے، عالمی برادری کو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم سے لاتعلق نہیں رہنا چاہئے، اقوام متحدہ کے پاس اب فیصلوں پر عمل کرنے کا وقت ہے،
  • اقوام عالم کو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کے وحشیانہ محاصرے پر آواز اٹھانی چاہئے، یو این ایچ آر سی کے بیانیے کا خصوصی شکریہ ادا کرتا ہوں،عمران خان کا سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر پیغام

اسلام آباد(الاخبار نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ یو این ایچ آر سی کمیشن بنا کر مقبوضہ وادی میں بھارتی مظالم کی تحقیقات کرائے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی صورت حال پر عالمی برادری کے ردعمل کا خیرمقدم کرتے ہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی صورت حال پر عالمی برادری نے تشویش کا اظہار کیا ہے، سیکریٹری جنرل یو این نے کشمیر کی صورت حال پر اظہار تشویش کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں چھ ہفتے سے جاری کرفیو پر تشویش خوش آئند ہے، عالمی برادری کو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم سے لاتعلق نہیں رہنا چاہئے۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کے وحشیانہ محاصرے پر آواز اتھانی چاہئے، یو این ایچ آر سی کی جان سے جاری کردہ بیان کا خصوصی شکریہ ادا کرتا ہوں۔عمران خان نے کہا کہ یو این ایچ آر سی کمیشن بنا کر مقبوضہ وادی میں بھارتی مظالم کی تحقیقات کرائے، اقوام متحدہ کے پاس اب فیصلوں پر عمل کرنے کا وقت ہے۔واضح رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں آج مسلسل 36ویں روز بھی کرفیو برقرار ہے اور مواصلات کا نظام مکمل پر معطل ہے، قابض انتظامیہ نے ٹیلی فون سروس بند کررکھی ہے جبکہ ذرائع ابلاغ پرسخت پابندیاں عائد ہیں۔کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق مواصلاتی نظام کی معطلی، مسلسل کرفیو اور سخت پابندیوں کے باعث لوگوں کو بچوں کے لیے دودھ، زندگی بچانے والی ادویات اور دیگر اشیائے ضروریہ کی شدید قلت کا سامنا ہے۔

Scroll To Top