ایک یاد گار میچ بالنگ بھی نوازشریف کی بیسٹمین بھی نوازشریف اور امپائر بھی نوازشریف! 29-08-2015

27اگست 2015ءکو وزیراعظم میاں نوازشریف نے اپنی پارٹی کے ایک اہم اجلاس میں یہ فیصلہ کیا کہ عمران خان کی ہیٹ ٹرک کا موثر ترین جواب حلقہ 122اور حلقہ 154میں زبردست کامیابی حاصل کرکے ہی دیا جاسکتاہے۔

اس فیصلے کا اعلان اور ” زبردست “ کامیابی حاصل کرنے کے عزم کا اظہار جناب پرویز رشید اور جناب احسن اقبال نے ایک پریس کانفرنس میں کیا۔ شہنشاہ اکبر کے ” نورتن“ آپ کو یاد ہوں گے۔ یہ دو ’ شاہِ وقت کے دو ر تن ہیں۔ باقی سات آپ خودگِن لیں۔
مجھے جنا ب پرویز رشید کا چیلنج سن کر 1962ءکے زمانے میں شائع ہونے والا ایک ہفت روزہ یاد آیا۔ اس کا نام Outlook تھا۔ اور اس کے ایڈیٹر اقبال برنی تھے۔ اس کے ایک سرورق پر ایک خاکہ شائع ہوا تھا جو کرکٹ کے حوالے سے تھا۔
امپائرنگ کے فرائض ایوب خان انجام دے رہے تھے لیگ امپائر بھی ایوب خان تھے۔ وکٹ کیپنگ بھی ایوب خان کررہے تھے۔ فرسٹ سلپ سیکنڈ سلپ تھرڈ سلپ سب ایوب خان تھے۔ مڈ آف اور مڈ آن بھی ایوب خان تھے۔ بالنگ کے لئے بھاگے بھی ایوب خان آرہے تھے۔ ان کے سامنے بیٹنگ کرنے والے بھی ایوب خان تھے۔ اور نان سٹرائکنگ اینڈ پر بھی ایوب خان تھے۔
ظاہر ہے کہ اس طرح کے میچ کا ایک ہی نتیجہ ہوسکتا ہے۔ میں پرویز رشید صاحب کو مشورہ دوں گا کہ وہ عمران خان اور جہانگیر ترین کو للکارنے کی بجائے اپنے شہنشاہ کو مشورہ دیں کہ ” ن “ لیگ کے مقابلے پر بھی ” ن“ لیگ کو ہی اتاریں۔ ورنہ ہوسکتا ہے کہ جسٹس (ر)ریاض کیانی سے کوئی بھول چوک ہو جائے!

Scroll To Top