بھارتی آبی دہشتگردی : عثمان بزدار کو متوقع سیلاب اورحفاظتی انتظامات پر بریفنگ

  • بھارت نے بغیر اطلاع کے دریائے ستلج میں پانی چھوڑا ، گنڈا سنگھ والا پر کل ایک لاکھ کیوسک سے زائد پانی گزرنے کا امکان
  • قصور سمیت دیگر اضلاع میں 81 ریلیف کیمپس قائم ،کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے ہمہ وقت چوکس رہا جائے، پانی کی آمد واخراج کو مسلسل مانیٹر کیا جائے‘ وزیر اعلیٰ کی ہدایت

لاہور(اےن اےن آئی) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت وزیراعلیٰ آفس میں اعلیٰ سطح کا اجلاس منعقد ہوا جس میں بھارت کی جانب سے دریائے ستلج میں پانی چھوڑے جانے کے بعد کی صورتحال، لوگوں کے انخلاءکیلئے اقدامات اور امدادی سرگرمیوں کا جائزہ لیا گیا۔وزیراعلیٰ نے اجلاس میں بھارت کی جانب سے دریائے ستلج میں پانی چھوڑنے کے پیش نظر قصور، اوکاڑہ، پاکپتن، وہاڑی، لودھراں، بہاولنگر اور بہاولپور میں تمام حفاظتی اقدامات اور ضروری تیاریاں مکمل رکھنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ دریا کے بیڈ سے لوگوں کا انخلاءیقینی بنایا جائے اور سیلابی ریلے سے قبل لوگوں کو بروقت محفوظ مقامات پر منتقل کیا جائے۔ امدادی کیمپس میں تمام ضروری اشیاءکی دستیابی یقینی بنائی جائے اور رےلےف کےمپس مےں ضروری اشےاءکی قلت نہےں ہونی چاہیئے۔ وزیراعلیٰ نے صوبائی وزراءآبپاشی اور ڈیزاسٹر مینجمنٹ کو قصور، اوکاڑہ اور دیگر اضلاع کے دورے کرکے صورتحال کا جائزہ لینے کی ہدایت کیاور کہا کہ سیکرٹری آبپاشی اور ڈی جی پی ڈی ایم اے بھی موقع پر جا کر امدادی سرگرمیوں کو مانیٹر کریں جبکہ میں حفاظتی انتظامات اور امدادی سرگرمیوں کا جائزہ لینے کیلئے کسی بھی ضلع کا دورہ کروں گا۔ انہوں نے کہا کہ ممکنہ سیلاب کے اندیشے کے پیش نظر عوام کے جان و مال کے تحفظ کے لئے ضروری انتظامات ہر لحاظ سے مکمل ہو نے چاہئیں ۔وفاقی و صوبائی ادارے قریبی رابطہ رکھیں اور کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لئے چوکس رہیں ۔ متعلقہ اضلاع کی انتظامیہ ممکنہ سیلاب سے نمٹنے کے لئے کئے جانے والے انتظامات کی ذاتی مانیٹرنگ کرے ۔ پانی کی آمد واخراج کو مسلسل مانیٹر کیا جائے۔ادویات ، ویکسینیشن ،جانوروں کے لئے چارے اورونڈے کا بھی بندو بست کیا جائے ۔وزیراعلیٰ کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ بھارت نے بغیر کسی اطلاع کے دریائے ستلج میں پانی چھوڑا ہے۔ گنڈا سنگھ والا پر کل ایک لاکھ کیوسک سے زائد پانی گزرنے کا امکان ہے۔ قصور سمیت دیگر اضلاع میں 81 ریلیف کیمپس قائم کر دیئے گئے ہیں۔اجلاس میں امدادی سرگرمیوں کے حوالے سے اقدامات پر غور کیا گیا اور حفاظتی اقدامات کا بھی جائزہ لیا گیا۔سےکرٹری آبپاشی نے دریائے ستلج میں پانی کی صورتحال جبکہ ڈی جی پی ڈی اےم اے نے پےشگی حفاظتی انتظامات اورضروری سازوسامان کے حوالے سے برےفنگ دی۔ اجلاس میں صوبائی وزیر ڈیزاسسٹر مینجمنٹ میاں خالد محمود، صوبائی وزیر آبپاشی محسن لغاری، سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو،پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ پنجاب،سیکرٹریز آبپاشی، سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن، پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر، ڈی جی پی ڈی ایم اے، کمانڈر ہیڈکوارٹر انجینئرنگ فور کور لاہور کے نمائندے کرنل سمیع اللہ، لائیوسٹاک اور ریسکیو 1122 کے حکام نے شرکت کی جبکہ قصور سے صوبائی وزیر ہاشم ڈوگر، کمشنر لاہور ڈویژن، ڈپٹی کمشنر جبکہ ساہیوال، ملتان اور بہاولپور ڈویژن کے کمشنرز اور اوکاڑہ، پاکپتن، بہاولنگر، وہاڑی، بہاولپور اور لودھراں کے ڈپٹی کمشنرز ویڈیو لنک کے ذریعے اجلاس میں شریک ہوئے۔اےک برس مےں پنجاب کے سرکاری ہسپتالوں مےں 8350بےڈز کا اضافہ :وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت90شاہر اہ قائداعظم پر جائزہ اجلاس منعقد ہوا ،جس مےں نیا پاکستان منزلیں آسان ،کمےونٹی ڈوےلپمنٹ پروگرام اوردےگر عوامی فلاح و بہبود کے زےرتکمےل پروگراموں پر پیش رفت کا جائزہ لےا گےا۔سالانہ ترقےاتی پروگرام کے تحت پراجےکٹس پر پےش رفت اوردےگرانتظامی و مالی امور کابھی جائزہ لےا گےا۔وزےراعلیٰ عثمان بزدار نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ صرف اےک سال مےں پنجاب کے سرکاری ہسپتالوں مےں 8350بےڈز کا اضافہ کےاگےا ہے۔سرکاری ہسپتالوں مےں بےڈز کی تعداد بڑھنے سے عوام کو علاج معالجے کی معےاری سہولت مےسر ہوگی۔ وزےراعلیٰ نے کارڈےالوجی انسٹی ٹےوٹ ،مےانوالی کے ہسپتال اورملتان مےں نشتر ٹو جلد از جلد مکمل کرنے کی ہداےت کی اور کہا کہ سروسز ہسپتال کی اےمرجنسی کی اپ گرےڈےشن اےک سال مےں مکمل کی جائے ۔انہوںنے کہا کہ پنجاب مےں 4 نئی ےونےورسٹےاں بنےںگی اور6 زےر تکمےل ےونےورسٹےاں جلد مکمل کی جائےںگی جبکہ صوبہ بھر مےں سپےشل اےجوکےشن کے10نئے سےنٹرز قائم کےے جارہے ہےں ۔وزےراعلیٰ نے کہا کہ کاشتکاروں کی سہولت کےلئے کثےر الجہتی کرےڈٹ کارڈ سکےم جلد از جلد شروع کی جائے گی ۔پنجاب مےں واٹر اورہل ٹورازم کے فروغ کےلئے 1.5ارب روپے مختص کےے گئے ہےں ۔بہاولپور مےں ڈبل ڈےکر بس سروس کا اجراءےقےنی بناےا جائے گا۔فےصل آباد ، تونسہ اورمظفرگڑھ مےں انڈسٹرےل سٹےٹس کے منصوبے شروع کےے جائےں گے۔”ہنر مند نوجوان پروگرام“ کے تحت 40ہزار طلباءکو ٹےوٹا کے اداروں مےں ٹےکنےکل اےجوکےشن دی جائے گی۔انہوںنے کہا کہ کمےونٹی ڈوےلپمنٹ پروگرام کے فےز ون اورٹو مےں 1733ترقےاتی منصوبے شامل ہےں جو15.9ارب روپے کی لاگت سے مکمل ہوںگے۔”نےا پاکستان منزلےں آسان “ کے تحت 174سڑکوں کی تعمےر و مرمت ہوگی۔70ارب روپے کی لاگت سے 485کلو مےٹر سڑکےں بنائی جارہی ہےں ۔انہوںنے کہا کہ چےچہ وطنی رجانہ،لےہ تونسہ،شورکوٹ جھنگ،حاصل پور بہاولنگراوردےپالپوروہاڑی کی سڑکےں بننے سے عوام کو آمدورفت مےں سہولت ہوگی۔تعلےم ،صحت سمےت 8پبلک سےکٹرکے منصوبوں کےلئے گائےڈ لائن دی جاچکی ہے ۔ صوبہ بھر مےں 5277سکےمےں11ارب 40کروڑ روپے کی لاگت سے مکمل کی جائےں گی۔وزےراعلیٰ نے کہا کہ ترقےاتی منصوبوں کی منظوری کے طرےقہ کارکو آسان اورمختصر بناےا جائے ۔پراجےکٹس کی منظوری مےں غےر ضروری تاخےرگوارا نہےں ۔ ترقےاتی منصوبوں کے لئے ارکان اسمبلی کی مشاورت کو ترجےح دی جائے ۔وزےراعلیٰ کو برےفنگ مےں بتاےا گےا کہ ورلڈ بےنک اوردےگر عالمی مالےاتی ادارے پنجاب مےں ترقےاتی منصوبوں کے لئے مالی معاونت فراہم کرےںگے۔صوبائی وزراءہاشم جواں بخت، سردار آصف نکئی، صوبائی مشیر ڈاکٹر سلمان شاہ، چیئرمین منصوبہ بندی و ترقیات، پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ، متعلقہ سیکرٹریز اور سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ نے اجلاس میں شرکت کی۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت 90شاہر اہ قائداعظم پراجلاس منعقدا ہوا،اجلاس میں شہری او ردیہی آبادی کو بنیادی سہولتوں کی فراہمی کے پروگرام کا جائزہ لےاگےاجبکہ عالمی بےنک اورایشین ڈوےلپمنٹ بینک کے اشتراک سے زےر تکمےل پراجیکٹس پر پیش رفت اور مستقبل کے منصوبوںپر غورکےاگےا۔وزےراعلیٰ نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہنئے پروگرام کے تحت نچلی سطح تک بنےادی سہولتوں کی فراہمی ےقےنی بنائی جائے گی۔ شہروں اوردےہات مےں صفائی کے نظام ،پینے کے صاف پانی کی فراہمی اورسیوریج سسٹم کو بہتر کےاجائےگا-غےر فعال واٹر سپلائی سکیموںاورغےر فعال سےورےج سکےموں کی بحالی کےلئے فنڈز مختص کےے جارہے ہےں۔وزےراعلیٰ کو برےفنگ مےں بتاےاگےا کہ واٹر سپلائی ،سےورےج ،سالڈ وےسٹ مےنجمنٹ اورعوامی سہولت کے دےگر منصوبے مکمل کےے جائےںگے۔صوبائی وزےر خزانہ ہاشم جواں بخت،چیئرمین منصوبہ بندی و ترقیات، متعلقہ سیکرٹریز ،سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ اور اعلی حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے ہاکی اولمپیئن ذاکر حسین کے انتقال پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے اپنے تعزیتی پیغام میں سوگوار خاندان سے دلی ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے دعا کی کہ اللہ تعالیٰ مرحوم کی روح کو جوار رحمت میں جگہ دے اور غمزدہ خاندان کو صبر جمیل عطا فرمائے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ہاکی کے کھیل کے فروغ کیلئے گراں قدر خدمات پر ذاکر حسین کی خدمات کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ ذاکر حسین نے ہاکی کے بین الاقوامی ٹورنامنٹس میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرکے ملک و قوم کا نام روشن کیا۔پاکستان میں ہاکی کے فروغ کیلئے مرحوم کی خدمات ناقابل فراموش ہیں، جنہیں ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔

Scroll To Top