پاکستان کے 12 بڑے ہیروز۔۔۔۔

آچ میں نے پاکستان کے مایہ ناز ہیروز کا تعین کرنے کے بارے میں سوچا تو ذہن اس انٹرویو کی طرف چلا گیا جو میں نے دسمبر1965ءمیں ایم ایم عالم مرحوم کا لیا تھا۔ وہ تب سکواڈرن لیڈر تھے۔
”دیکھ رہا ہوں کہ آپ کی ذاتی لائبریری میں ماﺅ کی تمام تصنیفات موجود ہیں۔ کیا وہ آپ کے سب سے پسندیدہ مصنف ہیں؟“ میں نے پوچھا تھا ۔ اور ایم ایم عالم کا جواب تھا۔
” جی نہیں۔۔۔ میں انہیں صرف سوشلسٹ نظریات سمجھنے کے لئے پڑھتا ہوں۔ میر ے سب سے پسندیدہ مصنف نسیم حجازی ہیں جنہیں میں اگر اپنا ہیرو بھی کہوں تو غلط نہیں ہوگا۔ میں ان کے کردار وں سے متاثر ہو کر ہی ایئر فورس میں گیا تھا۔ “
ایم ایم عالم نہیں جانتے تھے کہ میں نسیم حجازی کا بھانجا ہوں۔ مگر شاید میرے بہت سارے قارئین جانتے ہیں۔ میں پھر بھی ایم ایم عالم اور نسیم حجازی دونوں کو پاکستان کے عظیم ہیروز کی صف میں کھڑا کرنے سے نہیں جھجکوں گا۔
میرے ہیروز کی فہرست میں سب سے اوپر اے کیو خان کا نام آتا ہے۔ وجہ آپ جانتے ہیں۔ دوسرے نمبر پر عمران خان ہیں۔ آ ج اس کی بڑی وجہ تو یہی ہے کہ انہوں نے ایک تحریک کی بنیاد رکھی جسے برسوں کی جدوجہد کے بعد ملک میں برسراقتدار آنے والی سیاسی جماعت کاروپ دے دیا۔ وہ سیاسی جماعت جس نے کرپشن کی علامت بن جانے والی دوبڑی قوتوں کو تہس نہیں کرڈالا ۔ لیکن عمران خان اگر یہ عظیم کردار ادا نہ بھی کرتے تب بھی پاکستان کے ہیروز کی صف میں کھڑے ہوتے کیوں کہ ایک کرکٹر کی حیثیت سے انہوں نے پاکستان کا نام دنیا بھر میں روشن کیا۔۔۔
پاکستان کے تیسرے بڑے ہیرو زیڈ اے بھٹو ہیں جن کی سیاست سے اختلاف رکھنے والے لوگ بھی ان کے اس کردار کو نظر انداز نہیں کریں گے جو انہوں نے پاکستان کو ایٹمی قوت بنانے اور اسلامی بلاک کے تصور کو آگے بڑھانے میں ادا کیا۔
پاکستان کے چوتھے بڑے ہیرو نسیم حجازی ہیں۔ پانچویں اور چھٹے نمبر پر ایم ایم عالم او ر میجر عزیز بھٹی شہید کا نام آتا ہے۔ اس کے بعد میں ہاشم خان `جہانگیر خان `جان شیر خان اور سمیع اللہ کا نام لوں گا۔ ۔۔ گیارہویں نمبر پر فضل محمود اور بارہویں نمبر پر وسیم اکرم ہیں۔۔۔۔

Scroll To Top