آرمی چیف کی وزیر اعظم سے ملاقات :قومی سلامتی امور پر تبادلہ خیالات

  • وزیراعظم آفس میں ہونے والی اہم ملاقات میں ملکی داخلی اور خارجی سیکیورٹی سے متعلق مختلف امور زیر غور آئے، بری فوج کے سپہ سالار جنرل قمر جاوید باجوہ نے وزیراعظم عمران خان کو سیکیورٹی صورتحال سے متعلق تفصیلی بریفنگ دی
  • وزیر اعظم سے چینی سفیر کے ہمراہ سی پیک پر کام کرنے والی 15 کمپنیوں کے وفد کی بھی ملاقات، چینی قیادت عمران خان کے دورے کی منتظر ہے، چینی صدر اور وزیراعظم نے آپ کیلئے نیک خواہشات کا پیغام بھیجا ہے، وفد کی گفتگو

اسلام آباد: ( الاخبار نیوز) وزیراعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے ملاقات کی جس میں ملک کی سیکیورٹی کی صورتحال پر غور کیا گیا۔وزیراعظم عمران خان اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے درمیان یہ ملاقات وزیراعظم ہاو¿س میں ہوئی جس میں سرحدوں کی صورتحال پر بھی تبادلہ خیالات کیا گیا۔یہ رواں ماہ سیاسی اور عسکری قیادت کے درمیان ہونے والی دوسری ملاقات ہے۔ اس سے قبل 4 اپریل کو بھی وزیراعظم اور آرمی چیف کے درمیان ملاقات ہوئی تھی جس میں ملک کی مجموعی صورتحال کا جائزہ لیا گیا تھا۔ اس ملاقات میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے دہشتگردی کے خلاف جاری آپریشنز اور پاک فوج کی پیشہ وارانہ تیاریوں پر وزیراعظم عمران خان کو بریف کیا تھا۔دونوں قیادتوں کے درمیان ہونے والی ملاقات میں ملک کی مجموعی سلامتی کی صورتحال کا بھی جائزہ لیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان نے پاک فوج کی پیشہ وارانہ تیاریوں پر اظہار اطمینان کرتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستان خطے میں قیام امن کے لیے اپنا کردار ادا کرتا رہے گا۔دریں اثناءوزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ حکومت سی پیک منصوبوں کو بہت اہمیت دیتی ہے، سی پیک سے پورے خطے کو فائدہ ہوگا ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے چینی سفیر کے ہمراہ سی پیک منصوبوں پر کام کرنے والی 15 کمپنیوں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا جنہوں نے وزیراعظم سے اسلام آباد میںملاقات کی۔ وفد سے گفتگو میں وزیراعظم نے مزید کہا کہ چینی کمپنیوں کو سرمایہ کاری کی تمام سہولتیں دیں گے ۔ چینی سفیر نے چینی صدر اور وزیراعظم کی جانب سے نیک خواہشات کا پیغام پہنچایا اور کہاکہ چین کی قیادت وزیراعظم عمران خان کے دورے کی منتظر ہے ۔ چینی کمپنیاں پاکستان کی ترقی میں حکومت کے ساتھ تعاون جاری رکھیں گی۔

Scroll To Top