چین ملک سے آلودگی کے خلاف جیت کیلئے پر عزم

چیننے ملک سے آلودگی کے خاتمے کے حوالے سے جیت حاصل کرنے کے حوالے سے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ چین آلودگی کے خلاف جنگ کو ہر صورت جیتے گا اور چین ملک میں ماحولیاتی تحفظ کی قربانی دیکر کسی صورت اقتصادی ڈیویلپمینٹ کے تسلسل کا خواہاں نہیں ہے۔ اس حوالے سے گزشتہ ہفتے چایئنیز پیپلز پولیٹیکل ایڈوائزری کانفرنس کے حوالے سے ایک پریس بریفنگ سے خطاب کرتےہوئے چین کے وزیرِ ماحولیات لئی گانجی نے کہا ہے کہ چین رواں سال2019کو ملک میں اقتصادی ڈیویلپمینٹ اور ماحولیاتی تحفظ کے حوالے سے اقدامات کو ساتھ ساتھ لیکر چلنے کے لیے پر عزم ہے، انہوں نے کہا ک چین اقتصادی ترقی کیساتھ ساتھ ملک میں ایک بہتر شفاف ماحول کے حوالے سے پر عز م ہے، اور رواں سال چین ملک میں ماحولیاتی تحفظ کے بقا کی جنگ ہر صورت جیتنے کے لیے نئے اقدامات کا آغاز کرنے کے لیے پر عزم ہے۔ لئی نے واضح کیا کہ چین نے حالیہ چند برسوں میں ملک سے ماحولیاتی تحفظ کے حوالے سے بیشتر قدامات کو یقینی بنایا ہے اس حوالے سے یانگٹیز دریا کے ساتھ معاشی بیلٹ پر درپیش ماحولیاتی چیلنجز اور مسائل کے حل کے حوالےسے اقدامات شروع کیئے جا چکے ہیں اس ضمن میں اس علاقے کی عوام سے وعدہ کیا گیا ہے کہ ممکنہ ماحولیاتی تحفظ کے حوالے سے مقرر اہداف کو کامیابی سے یقینی بنایاجائیگا۔ اس حوالے سے لئی نے واضح کیا کہ آلودگی کے خلاف جنگ ای یک مشکل چیلنج ہے جسےِ جیتنے کے لیے تمام موجود عوامل کو کارفرما کیا جائیگا۔ اور اس ضمن میں شہری اور ریجنل سطع پر پر موجود تفاوت کو کم سے کم کیا جائیگا۔ انہوں نے کہا ماضی میں ماحولیاتی چیلنجز کے حل کے حوالے بیشتر فیکٹریز کو بند بھی کرنا پڑا ہے جس کے باعث کچھ علاقوں میں مقامی سطع پر مالیاتی خسارے کا سامنا کرنا پڑا ہے، تاہم آلودگی کے خاتمے کے حوالے سے اس طویل جنگ کو جیتےنے کے حوالے سے چھوٹے نقصانات کی فکر کیئے بغیر ماحولیاتی تحفظ کو ہر صورت یقینی بنایا جائیگا، اور مستقبل میں چین کی تیزی سے بڑھتی گروتھ شرح کو اعلی کوالٹی گروتھ میں کامیابی سے تبدیلی کا سفر شروع کیا جا چکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ 2018میں چین کے 338شہروں میں نیلے آسمان کا تناسب کے حوالے سے قائم اہداف میں تیزی سے سے اضافہ ہو اہے جس کی شرح 1.3فیصد نے 79.7فیصد تک ریکاڑڈ کی گی ہے۔ اور آلودگی کا سبب بننے والے عوامل کی PMکی شرح میں بہتر اقدامات کے باعث 9.3فیصد تک سالانہ کمی ریکارڈ کی گئی ہے، جو ایک بہترین کامیابی ہے۔ دوسری جانب ملک میں اسموگ کے خاتمے کے حوالےسے چین نے بیشتر انڈسٹریل پراجیکٹس کو کول سے گیس اور کول سے الیکٹریسٹی پر منتقل کر دیئے ہیں اس حوالے سے 2018میں ماضی کے برعکس 35شہروں کو کول فری پراجیکٹس پر استوار کیا جا چکا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یانگٹیز ریور کیساتھ اقتصادی بیلٹ سے منسلک شہروں میں پینے کے پانی کو بہتر بنانے کے حوالے سے اہم کلیدی عوامل اختیار کیئے گئے ہین اس حوالے سے ڈرنکنگ واٹر کے 99فیصد سورسز کو یانگٹیز ریور کے برعکس کاﺅنٹی لیول پر لگایا جا رہا ہے۔ اس حوالے سے گیارہ میونسپلیٹیز میں ڈرنکنگ واٹر سے متعلق بیشتر مسائل کامیابی سے حل کیئے جا چکے ہیں دوسری جانب دیگر معاشی مراکز کے شہروں میں ڈرنکنگ واٹر سے متعلق مہلک موادات کو کامیابی سے شفاف کرنے کےاقدامات شروع کیے جا چکے ہیں اور متاثرہ آلودہ پانی کو بہتر اور معیاری بنانے کے حوالے سے بہت سے جدید اقدامات شروع کیئے گیءہیں ۔ لئی نے کہا کہ چینی صدر شی جنہنگ نے رواں ماہ اعلی سطعی ایڈوائزری باڈی کے اجلاس کے حوالے سے جس عزم کا اظہار کیا تھا اس کو مد،نظر رکھتے ہوئے اندرونِ منگولیا کے ڈپٹیز کے ساتھ ملاقات میں چینی صدر نے کہا تھا کہ مقامی حکومتوں کو ماحولیاتی تحفظ کی قربانی دیکر کسی صورت اقتصادی ڈیویلپمینٹ کی اجازت نہین دی جا سکتی اس صورت میں معاشی ترقی اور ڈیویلپمینٹ طویل مدتی مسائل اور چیلنجز سے دوچار ہوگی۔ ان عوامل کے پیشِ نظر ماحولیات کے خلاف اقتصادی جنگ ہر صورت جیتی جائیگی۔ اس حوالےسے چینی صدر شیجنہگ نے واضح کیا ہے کہ چین کے شمالی پر فضا مقامات کی قدرتی نظاروں کو بالخصوص ماحولیاتی تحفظ کے حوالے سے درپیش چیلنجز سے بچانے کے لیے ہر ممکن اقدامات یقینی بنائیں جائیں گے اس حوالے سے مقامی حکومت کو ایسے تمام اقتصادی پراجیکٹس کو روکنے کے بھی اقدامات جاری کیئے گے جو ممکنہ طور پر ماحولیاتی تحفظ کے لیے چینلج بن سکتے ہیں اور اس تناظر میں ماھولیاتی ریڈ لائن کو کراس کرنے کے حوالےسے سخت اقدامات کابھی عندیہ دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ ماحولیاتی تحفظ کے حوالے سے جو چیلنجز عوام کو درپیش ہیں ان کے ازالے کے حوالےسے ترجیعی بنیادوں پر اقدامات اور عوامل یقینی بنائیں جائیں تاکہ عوام کو ممکنہ ماحولیاتی مسائل سے چھٹکارہ دلایا جا سکے۔ لئی نے ان افواہوں کی بھی تردید کی کہ گرین ڈیویلپمینٹ ملک میں اقتصادی ڈیویپلپمنٹ کو روکے گی انہوں نے واضح کہا کہ ماحولیاتی تحفظ کے لیے ممکنہ سرمایہ کاری ایک بہترین اقتصادی امر ثابت ہوگا، اس حوالے سے وزارتِ خزانہ کے نائب وزیر ہﺅ ہنگسی نے کہا کہ حکومت کیجانب سے ملک میں ماحولیاتی تحفظ کو یقینی بناتے ہوئے نئے اقدامات کا آغاز کیا گیا ہے جس کے تحت آلودگی کے خاتمے کے حوالے سے جنگ اور ڈیویلپمینٹ میں ایک توازن پیدا کیا جائیگا تاکہ آلودگی سے متعلق چیلنجز کا خاتمہ بھی یقینی بنایا جا سکے اور گروتھ ریٹ کو بھی برقرار رکھا جا سکے۔ اس حوالے سے فیکٹریز کو بند کرنے کی بجائے ایسے سرمایہ کاری عوامل اختیار کیئے جا رہے ہیں جو ان فیکٹریز کو متبادل انرجی زرایع کے حوالے سے مدد کریں اور فیکٹریز ملازمیں کو نئی ملازمتوں کے حوالے سے مثبت کردار ادا کریں۔ اس ضمن میں گرین انڈسٹری ایک نئی گروتھ میکنزیم ہے اس حوالےسے جو کمپنیز آلودگی کے خاتمے کے حوالے سے ممکنہ متبادل زرایع میں سرمایہ کاری کرین گیں وہ تیزی سے منافع کی شرح کو یقینی بنائیں گیں۔ اس حوالے سے شمالی صوبے ہیبی کے شہرہنگشوئی کی مثال سب کے سامنے ہے،جہاں پر توانائی کے متبادل زرایع کے استعمال سے انٹر پرائسز نے بھر پور منافع کمایا ہے۔ ہنگشوئی بیلی ربر پراڈکٹ فیکٹری نے ماحولیاتی تحفظ عوامل کیساتھ پرانے فیکٹری ایریا کو خیر آباد کرتے ہوئے یورپی مارکیٹس تک رسائی حاصل کر لی ہے۔۔

Scroll To Top