برٹش ائیر ویز کا پاکستان میں فلائٹ آپریشن شروع کرنے کا فیصلہ

  • فلائٹ آپریشن آئندہ برس جون سے شروع ہوگا،، لندن سے اسلام آباد ہفتہ وار تین پروازیں چلیں گی، فلائٹس اسلام آباد ۔ ہیتھرو ایئر پورٹ آپریٹ ہونگی، پاکستان میں سکیورٹی صورت حال بہتر ہونے پر آپریشن بحالی کا فیصلہ کیا ہے ،برطانو ی ڈپٹی ہائی کمشنر رچرڈ کراﺅڈر کی عبدالرزاق داﺅد اورزلفی بخاری کے ہمراہ پریس کانفرنس
  • ڈائریکٹر جنرل انٹر سروسز پبلک ریلیشینز میجر جنرل آصف غفور نے سوشل میڈیا پر برٹش ایئرویز کا پاکستان میں فلائٹ آپریشن بحال کرنے پر شکریہ ادا کیا ہے اور کہا ہے کہ سکیورٹی فورسز کی دہشت گردی کے خلاف قربانیاں اور کاوشیں رنگ لا رہی ہیں

اسلام آباد ( آن لائن ) برطانوی حکومت نے نئے پاکستان پراعتماد کا اظہار کرتے ہوئے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سے برطانوی داالحکومت لندن کے لیے برٹش ائیر ویز کی پروازیں شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اسلام آباد میں برٹش ائیرویز ایشیاءپیسفک اور مشرق وسطی کے سیلز سربراہ رابرٹ ولیم اور برطانو ی ڈپٹی ہائی کمشنر رچرڈ کراﺅڈر نے عبدالرزاق داﺅد اور معاون خصوصی زلفی بخاری کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ برٹش ایئر ویز نے 10 سال بعد پاکستان میں پروازیں بحال کرنے کا اعلان کیا، نمائندہ برٹش ایئر ویز نے کہا کہ پاکستان کی ثقافت بین الاقوامی سطح پر بہت مقبول ہے اورپاکستان ایک خوبصورت ملک ہے، گزشتہ چند سالوں کے دوران سے پاکستان میں سیکیورٹی صورت حال بہتر ہونے پر کمپنی نے فلائٹ آپریشن بحال کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ برٹش ایئرویز اسلام آباد سے ہیتھرو ایئر پورٹ فلائٹ آپریٹ کرے گی، لندن سے اسلام آباد ہفتہ وار تین پروازیں چلائی جائیں گی۔ برطانوی نمائندے نے کہا کہ فلائٹ آپریشن آئندہ سال ، جون 2019ء سے شروع کیا جائے گا اور دو طرفہ ٹکٹ 499 پاو¿نڈ میں دستیاب ہوگا۔اس موقع پرقائم مقام برطانوی ہائی کمشنر رچرڈ کراو¿ڈر نے کہا کہ برطانیہ پاکستان میں تیسرا بڑا سرمایہ کار ہے، دونوں ممالک کے تعلقات بہت خاص ہیں، برطانیہ میں 15 لاکھ لوگوں کی آبائی جڑیں پاکستان میں ہیں، پاک فوج اورعوام نے دہشت گردی کے خلاف بہت قربانیاں دی ہیں، پاکستان میں سیکیورٹی صورتحال بہت بہتر ہے، پاکستان کی معیشت ترقی کر رہی ہے۔لیے برٹش ائیرویز کی پاکستان واپسی پر اس کا خیرمقدم کرنا انتہائی باعثِ مسرت ہے۔ برطانوی فلیگ کیریئر کی لندن ہیتھرو اور اسلام آباد کے نئے بین الاقوامی ایئرپورٹ کے درمیان براہِ راست پرواز کا آغاز دونوں ممالک کے لیے خوشی کی خبر ہے۔برطانیہ اور پاکستان کے درمیان تعلقات چاہے وہ ثقافتی ہوں یا کرکٹ پر، یا عوام، سیاست اور تعلیم پر ہوں پہلے سے ہی غیر معمولی ہیں۔ میں اس پرواز کے آغاز کو ان روابط کے بہترین اور بااعتماد مستقبل کے تناظر میں دیکھ رہا ہوں۔ اور بہرحال یہ گذشتہ چند برسوں کے دوران پاکستان میں امن و امان کی بہتر ہوتی ہوئی صورتحال کا بھی ثبوت ہے۔ برٹش ائیر ویز کی واپسی ہماری بڑھتی ہوئی تجارت اور سرمایہ کاری کے مزید فروغ میں بھی مدد گار ثابت ہوگی۔ برٹش ائیرویز پاکستان میں بڑی تعداد میں پہلے سے مصروفِ عمل برطانوی کاروباری اداروں میں بھی ایک اضافہ ہے۔ میں پ±ر امید ہوں کہ اس سے میری طرح برطانیہ کے دیگر افراد کو بھی علم ہوجائے گا کہ پاکستان کس قدر خوبصورت ملک ہے۔ میں ماہِ جون میں اس پرواز کے آغاز پر خود بھی اس سے سفر کرنے کا خواہش مند ہوں۔” اسلام آباد بہت سارے سبزہ زاروں اور باغات سے مزین ایک پ±رامن اور پ±ر سکون شہر ہے۔ یہ ورثہ مالا مال، اور ثقافت کا ایک مرکز بن چکا ہے۔ یہاں بڑی تعداد میں عجائب گھر، بازار، مساجد اور ہائکنگ کے بہترین ٹریل موجود ہیں۔ یہاں بڑی تعداد میں قائم ریسٹورنٹس پاکستانی سے لے کر دنیا بھر کے انواع اقسام کے لذیذ ترین کھانے پیش کر تے ہیں۔ برٹش ائیر ویز کی پاکستان کے لیے پروازوں کی قدیم تاریخ موجود ہے اور پاکستان کے دار الخلافہ اسلام آباد کے لیے لندن سے پہلی باقاعدہ پرواز کا آغاز 1976 میں کیا گیا تھا۔اسلام آباد کے لیے لیے شروع کی جانے والی پرواز 2019 کے دوران برٹش ائیر وایز کے سو سال کی تکمیل کی پر کیے جانے والے چار طویل فاصلے کے فضائی روٹ میں سے ایک ہے۔ برٹش ائیرویز کی جانب امریکہ میں پٹسبرگ اور چارلسٹن کے علاوہ چاپان میں اوساکا کے لیے اور متعدد چھوٹے فاصلے کے روٹ پر بھی براہِ راست پروازوں کا آغاز کیا جا رہا ہے۔برٹش ائیر ویز کی طویل پروازوں پر ایئرلائن کی جانب سے کھانے اور مشروبات پیش کیے جاتے ہیں۔ مسافروں کو آن لائن چیک اِن اور پرواز سے چوبیس گھنٹے پہلے تک بغیر کسی اضافی ادائیگی کے اپنی مرضی کی نشست کے انتخاب کی سہولت حاصل ہوتی ہے۔ مسافروں کو بہتر پرواز کی فراہمی کے لیے ایئر لائن ہر نشست پر بہترین درجے کے وائی فائی اور بجلی کے کنیکشن کی فراہمی، طویل پرواز کے 128 طیاروں کی نئی اندرونی تزین اور 72 نئے طیاروں کی خریداری پر ساڑھے چار ارب برطانوی پاﺅنڈ کی سرمایہ کاری کر رہی ہے۔ اگلے سال برٹش ائیر ویز بزنس کلاس کی تمام نشستوں کے لیے درمیانی راستے تک براہِ راست رسائی کی سہولت کا آغاز کرے گی ۔پریس کانفرنس کے دوران وزیراعظم کے معاون خصوصی زلفی بخاری نے کہا کہ برٹش ایئرویز کی جانب سے پاکستان کے لیے پروازیں دوبارہ بحال کرنے کا خیر مقدم کرتے ہیں اور ہم چاہتے ہیں کہ پاکستان کا رابطہ دنیا بھر سے قائم رہے۔عبدالرزاق داﺅ د نے کہا کہ نئی حکومت کے قیام سے بین الاقوامی سطح پر پاکستان پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے پاکستان میں سرمایہ کاری کرنے سمیت ٹورزم میں بھی اضافہ ہوگا ۔ انہوںنے کہاکہ آئندہ چند سالوں کے دوران پاکستان میں بین الاقوامی سرمایہ کاری میں اضافہ ہوگا۔۔ دریں اثناءپاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے ڈائیریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ پاکستانی قوم اورسیکیورٹی فورسزکی 10 سالہ جدوجہد کے فوائد سامنے آنے لگے۔ڈی جی آئی ایس پی آر نے سوشل میڈیا پر برٹش ایئرویز کا پاکستان میں فلائٹ آپریشن بحال کرنے کا شکریہ ادا کیا ہے۔برطانوی فضائی کمپنی برٹش ایئر ویز کے پاکستان کے لیے پروازیں بحال کرنے کے اعلان کے بعد ترجمان پاک فوج نے سوشل میڈیا پرہمیں آگے ہی جانا ہے کاہیش ٹیگ استعمال کرتے ہوئے برٹش ایئر ویز کا شکریہ ادا کیا۔

Scroll To Top