دہشت گردی کیخلاف جنگ میں وہ قیمت ادا کی جس کا کوئی تخمینہ نہیں ،عمران خان

  • مسلح افواج سمیت دیگر اداروں نے دہشت گردی کےخلاف فیصلہ کن معرکہ سرانجام دیا‘شہداءکو خراجِ عقیدت اور غمزدہ والدین سے دِلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہیں
  • نقصانات کے باوجود ہم ملکی، علاقائی اور عالمی امن کےلئے پرعزم ہیں،وزیراعظم کا اے پی ایس سانحہ کی چوتھی بر سی پر بیان

اسلام آباد(آن لائن) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ قوم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں وہ قیمت ادا کی ،جس کا کوئی تخمینہ نہیں لگا سکتا۔سانحہ آرمی پبلک اسکول پشاور کے شہدا کی چوتھی برسی کے موقع پر اپنے پیغام میں وزیراعظم نے کہا کہ دنیا کی اس جنگ کی سب سے بھاری قیمت ہماری افواج، سپاہیوں اور نہتے شہریوں نے ادا کی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان نے ہزاروں جانوں کی قربانی دی اور بے انتہا معاشی نقصانات اٹھائے، اگر کوئی موردِ الزام ٹھہراتا ہے تو ان کو واضح کر دینا چاہتا ہوں کہ نقصانات کے باوجود ہم ملکی، علاقائی اور عالمی امن کےلئے پرعزم ہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ 16 دسمبر کا دن ہمیں ا±س سیاہ دن کی یاد دلاتا ہے ،جس روز معصوم جانوں کی شہادت کے واقعے نے پوری قوم کو غم میں مبتلا کیا اور معصوم بچوں کی شہادت نے قوم میں دہشت گردی کے خلاف وحدت کو جنم دیا۔ عمران خان نے کہا کہ افواجِ  پاکستان اور دیگر اداروں نے دہشت گردی کےخلاف فیصلہ کن معرکہ سرانجام دیا اور دہشت گردی کے خلاف آپریشن ردالفساد اور ضرب عضب جیسی مثال نہیں ملتی۔ وزیراعظم کا اپنے بیان میں کہنا تھا کہ سانحہ اے پی ایس پشاور میں بچھڑ جانے والوں کی یاد ہمیشہ موجود رہے گی، شہیدوں کو خراجِ عقیدت اور شہدا کے غمزدہ والدین سے دِلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کو ایسا معاشرہ بنائیں گے جہاں فرقہ واریت، مذہب و لسانیت کی تفریق نہیں ہوگی، ملک میں کسی بھی طرز پر انتہا پسندی اور تشدد کو برداشت نہیں کیا جائےگا، اپنی بہادر افواج اور قانون نافذ کرنے والے تمام اداروں کے ہیروز کو سلام پیش کرتا ہوں۔

Scroll To Top