سری نگر:14 نوجوانوں کی شہادت کیخلاف کشمیری سراپا احتجاج

  • شہداءکی نماز جنازہ میں ہزاروں افراد کی شرکت، آزادی کے حق میں اور قابض بھارتی افواج کےخلاف شدید نعرے بازی
  • حریت قیادت کی اپیل پر مقبوضہ وادی میں 3روزہ ہڑتال ، کاروباری مراکز اور دکانیں بند ، سری نگر میں آج بادامی باغ تک احتجاجی مارچ کیا جائےگا

سری نگر(آن لائن) مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلواما میں 14 نوجوانوں کی شہادت کےخلاف کشمیری سراپا احتجاج بن گئے ہیں۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق گزشتہ روز بھارتی فوج نے ضلع پلواما میں آپریشن کے نام پر بربریت کا مظاہرہ کرتے ہوئے مزید 14کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا تھا ،قابض بھارتی فوج کے جبر کا نشانہ بننے والوں میں سے 8 نوجوانوں کو ضلع پلوامہ کے مختلف علاقوں میں سپرد خاک کیا گیا ،جن کی نماز جنازہ میں ہزاروں افراد نے کرفیو توڑتے ہوئے شرکت کی ،شہید نوجوانوں کی نماز جنازہ میں شرکت کے لیے ضلع بھر سے شریک ہونے والے ہزاروں افراد نے اس موقع پر آزادی کے حق میں اور قابض بھارتی فوج کےخلاف شدید نعرے بازی بھی کی۔دوسری جانب حریت قیادت کی اپیل پر مقبوضہ وادی میں 3روزہ ہڑتال پر کاروباری مراکز اور دکانیں بند کردی گئی ہیں جبکہ سری نگر میں (آج)سوموار کو بادامی باغ تک احتجاجی مارچ کیا جائےگی،مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی جانب سے ریاستی دہشتگردی اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں جاری ہیں۔واضح رہے کہ گزشتہ روز انسانی حقوق کے عالمی دن پر کشمیر میڈیا سروس کی جانب سے وادی میں بھارتی مظالم سے متعلق رپورٹ جاری کی گئی تھی جس میں بتایا گیا کہ 1989 سے اب تک قابض فوج نے 95 ہزار کشمیریوں کو شہید کیا۔

Scroll To Top