شنگھاہی درامدی ایکسپو چین کی کشادگی پالیسزکاواضح ثبوت ہے

چین کی پہلی بین الاقوامی درامدی ایکسپو کا انعقاد گزشتہ ہفتے نومبر5-10کے مابین چین کے شہر شنگھاہی میں کیا گیا، ایکسپو میں دنیا کے 82ممالک کے ڈیڑھ لاکھ سے زائد مندوبین اور اعلی حکومتی عہدیداروں کی جانب سے خصوصی طور پر شرکت کی گئی۔ ایکسپو میں شریک ممالک کی جانب سے اور بیشتر بین الاقوامی تنظیموں کی جانب سے ملکی پویلینیز میں انکے اقتصادی اور تجارتی عوامل کو پیش کیا گیا، اس طرح سے 3000کمپنیز، 1,60,000خریداروں اور130ممالک کے کاروباری سرگرمیوں کو ایکسپو میں مختلف اسٹالز کی صورت میں آراستہ کر کے اجاگر کیا گیا۔ واضح رہے کہ بین الاقوامی سطع پر کسی بھی ملک کی جانب سےشنگھاہی درامدی ایکسپو پہلی درامدی نمائش تھی جو قومی اور بین الاقوامی سطع پر کسی بھی ملک کی جانب سے منعقد کی گئی۔ اس طرح سے چین نے درامدی ایکسپو کے انعقاد سے اپنی مارکیٹ کو بیرونی دنیا کے لیے کشادہ کرنے کا عملی ثبوت فراہم کیا ہے، یوں شنگھاہی درامدی ایکسپوکے عوامل کو زیادہ موثر اور متحرک بنانے اور ملک میں ڈیویلپمنٹ کوالٹی کو مزید مستحکم اور فعال بنانے کے حوالے سے شنگھاہی میونسپل گورنمنٹ کی جانب سے مقامی سطع پر تجارتی نظام کو بہتر اور موثر بنانے کے حوالے سے شنگھاہی کی مقامی حکومت کی جانب سے ون اسٹاپ ٹریڈنگ سروس پلیٹ فارم کا بھی اجراءکیا گیا ہے تاکہ آن لائن اورآف لائن ٹریڈنگ اور تجارتی ڈیلز کے لیے خدمات روزانہ اور سالانہ کی بنیاد پر بلا تعطل یقینی کی جا سکیں۔اس ضمن میں شنگھاہی کی مقامی حکومت کی جانب سے آن لائن تجارتی سروسز کیساتھ ساتھ چار خریداری ایجنٹس مقرر کیئے گئے ہیں اور18دیگر منسلک ٹریڈنگ گروپس بھی تشکیل دئیے جا چکے ہیں ، اسی طرح آن لائن 6+365گروپ روزانہ اور سالانہ کی بنیاد پر آن لائن سروسز فراہم کر رہا ہے، اس طرح سے شنگھاہی درامدی ایکسپو کے اختتام پر بھی شنگھاہی شہر میں 6مختلف مقامات پر فوڈ اور صارفین کی سہولت کو مدنظر رکھتے ہوئے فوڈ اور صارفین کی بنیادی ضروریاتِ زندگی کی اشیاءکی فروخت کے لیے سینڑز قائم کیئے گئے ہیں جہاں سے شنگھاہی کے ڈیوٹی فری زونز میں کسٹمرز کو سال بھر مصنوعات ڈیوٹی فری ریٹس پر میئسر آئیں گے۔ پوڈونگ ڈسٹرکٹ کے لیکانگ علاقے میں امریکی کار ساز کمپنی ٹیسلا انکارپوریشن کا کارخانہ قائم کیا جا رہا ہے، یہ وسیع و عریض کارخانہ اس علاقے میں ایک بڑے قطعہ اراضی جو 8,60,000مربع میٹر پر پھیلا ہوا ہے تیزی سے تکمیل میں ہے جہاں سے ٹیسلا کمپنی چین میں کار سازی کا کام شروع کریگی۔ رواں سال جولائی 10کو ٹیسلا کارپوریشن نے شنگھاہی میونسپل گورنمنٹ کیساتھ اس کار فیکٹری کو قائم کرنے کے حوالے سے معاہدہ طے کیا، اور اسی دن شنگھاہی مقامی حکومت نے 100ایسے نئے عوامل کو غیر ملکی انٹر پراسئز کے لیے متعارف کروایا جو غیر ملکی سرمایہ کاری کے حوالے سے مختلف عوامل اور امور بشمول فنانس اور انٹی لیکچوئل پراپرٹی پروٹیکشن سے متعلق تھے صرف ایک دن میں یقینی بنائے تاکہ مقامی سطع پر غیر ملکی سرمایہ کاری کو سہولت ہو اور ملک میں کشادگی پر مبنی عوامل کو عملی طور پر یقینی بنایا جا سکے۔ ان اوامر اور عوامل کی مدد سے ملک میں مقامی سطع پر غیر ملکی سرمایہ کاری کے حوالے سے ممکنہ رکاوٹوں کا خاتمہ کیا گیا اور چین نے ملک میں جدید اور اعلی معیار کی مینوفیکچرنگ سیکٹر کو بھر پور انداز میں ترجیع بنیادوں پر ممکنہ سہولیات فراہم کی ہیں مینوفیکچرنگ کے ان شعبوں میں آٹو موبائلز، ائیر کرافٹ، اور شپ بلڈنگ کی صنعتیں شامل ہیں۔ شنگھاہی۔لنکیانگ ڈیویلپمنٹ ایڈمنسٹریشن کی پارٹی کمیٹی کے سیکرٹری چنِ جی کیمطابق بلاشبہ ٹیسلا جیسی بڑی کار ساز فیکٹری کے چین میں پلانٹ لگانے سے مقامی کار ساز اداروں پر اثرات مر تب ہونگے تاہم حکومتی سطع پر جب سروئے کروائے گئے تو ان کے نتائج کیمطابق یہ فیصلہ کیا گیا کہ چینی مارکیٹ میں انرجی گاڑیوں کی مارکیٹ میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے اور مستبقل میں چین کے لوگ تیزی سے انرجی گاڑیوں کی طلب بڑھ رہی ہے اس امر کے پیشِ نظر چین نے بہادری کیساتھ ٹیسلا جیسے بڑے کارساز ادارے کو چین میں انرجی گاڑیوں کی تیاری کے حوالے سے پلانٹ لگانے کی منظوری دی، یوں چینی انٹر پرائسز کے خدشات کے برعکس ٹیسلا کو پلانٹ لگانے کی منظوری دی گئی کیونکہ تحفظ پسندانہ پالیسز سے عالمی سطع پر تنہائی میں ہی اضافہ ہوتا ہے۔ یوں شنگھاہی مقامی حکومت غیر ملکی اعلی معیار انڈسٹری کے فروغ کے حوالے سے کوشاں ہے اور ملک میں کشادگی پالیسز کے اعلی معییار کو یقینی بنانے کے لیے پر عزم ہے۔ اسی طرح سے سروسز سیکٹر، مینو فیکچرنگ انڈسٹری میں مسابقتی عوامل کو تیزی سے کشادگی پالیسیز کے حوالے سے اپ گریڈ کیا جا رہا ہے اور بین الاقوامی کارپوریشنز کو چین میں اپریشنز کے لیے ایک آئیڈیل ماحول فراہم کرنے کی ہر پہلو سے سعی یقینی بنائی جا رہی ہے تاکہ غیر ملکی انٹر پرائسز کو چین میں سرمایہ کاری کے لیے ہر ممکن سہولت فراہم کی جا سکے۔ اس حوالے سے شنگھاہی کے مئیر اینگ یانگ کا کہنا ہے کہ بیشتر غیر ملکی ملٹی نیشنل کمپنیز اور کارپوریشنز چین میں غیر ملکی سرمایہ کاری سے ریسرچ اینڈ ڈیویلپمنٹ سینٹرز قائم کر رہے ہیں جس سے مجموعی طور پر ملک میں پراڈکتس کے اعلی معیار کے حوالے سے ایک مسابقتی ماحول جنم لےگا جس سے تمام انڈسٹریز بہتر اور مستحکم معیار کی جانب گامزن ہونگے۔ ٹیسلا پراجیکٹ کو چین میں فعال کرنے کے حوالے سے موثر انداز میں سہولیات بر وقت فراہم کی گئیں جس کے باعث 6ماہ کا پراجیکٹ آدھی مدت میں ہی فعال کر دیا گیا۔ اس طرح سے شنگھاہی نے عالمی اور بین الاقوامی معیارات کو یقینی بناتے ہوئے شنگھاہی میں ایک قانونی، بین الاقوامی اور سہولیات سے بھر پور ماحول فراہم کرنے کے حوالے سے تمام عوامل کو یقینی بنایا جا رہا ہے تاکہ غیر ملکی سرمایہ کاروں اور سرمایہ کاری کو ایک مستحکم اور فعال کاروباری ماحول میئسر آ سکے۔ اس تناظر میں کیمونسٹ پارٹی آف چائینہ کے سیکرٹری برائے شنگھاہی میونسپل کمیٹی لی کیانگ کا کہنا ہے کہ شنگھاہی کا کاروباری اور سرمایہ کاری ماحول موثر قانونی اور بین الاقوامی معیار کی سہولیات سے مزین کیا جا رہا ہے کوئی بھی بزنس ماحول بہترین نہیں ہوتا تاہم اسے بہتر بنایا جا سکتا ہے۔ گزشتہ ماہ28 اکتوبر کو30ویں بین الاقوامی لیڈرز ایڈوئزری کونسل کا اجلاس برائے مئیر آف شنگھاہی منعقد کیا گیا جس میں موجودہ حالات اور پسِ منظر کے حوالے سے کشادگی کو مزید موثر بنانے کے حوالے سے عوامل کے آغاز کا عزم کیا گیا۔ اس اجلاس میں 500کمپنیز کے اعلی عہدیداروں کی جانب سے تجاویز اور پلاننگ بارے حکمتِ عملی پیش کی گئی تاکہ شنگھاہی میں تجارتی فنانسنگ میں موثر اضافے اور غیر ملکی سرمایہ کاری بارے منفی تاثر کا خاتمہ یقنی بنایا جا سکے۔ روچے گروپ کے سی ای اوسیورن شوان کا کہنا ہے کہ وہ اس اجلاس میں باقاعدگی سے حصہ لیتے ہیں کیونکہ انکی تجاویز پر عمل درامد کیا جاتا ہے اور چین میں بزنس ماحول کے موثر ہونے سے چین میں مزید ملٹی نیشنل کارپوریشنز آئیں گی، اسی طرح گزشتہ ماہ عالمی سطع پر کمپنیز نے شنگھاہی میونسپل کمیٹی کیساتھ 12بڑے منصوبوں بشمول 23.4بلین مالیت کی غیر ملکی سرمایہ کاری کے حوالے سے معاہادات پر دستخط کیئے۔ سوئس صنعتی ادارےABBگروپ کیمطابق وہ شنگھاہی میں 150ملین ڈالر کی سرمایہ کاری سے شنگھاہی میں اعلی معیار کی روبوٹک فیکٹری قائم کرنے کیلئے پر عزم ہیں ، رواں سال کے اختتام تک شنگھائی میں سرمایہ کاری کرنیوالے ممالک کی تعداد 178تک جا پہنچے گی، شنگھائی میں اس وقت50,000غیر ملکی سرمایہ کاری والی کمپنیز موجود ہیں جبکہ 653غیرملکی عالمی شہرت یافتہ کارپوریشنز کے صدر دفاتر شنگھاہی میں ہیں ، جبکہ438ریسرچ اینڈ ڈیویلپمنٹ سینٹرز وائم ہیں ۔

Scroll To Top