بڑے قبضہ گروپو ں پرہاتھ ڈالنے کا اعلان:100ارب روپے کی زمین قبضہ مافیا سے واگزار کرا لی، وزیر اعظم

  • کچی آبادیوں اور غریب بستیوں کو نہیں چھیڑیں گے ،کراچی میں ریلوے کے پاس اتنی مہنگی زمین ہے جس سے ریلوے کا قرضہ اتارا جاسکتا ہے ، وہ قومیں ترقی نہیں کرتیں جہاں چھوٹا طبقہ امیر ہو اور باقی لوگ غربت کی چکی میں پس رہے ہوں
  • انگریز ہمارے ملک میں 11 ہزار کلومیٹر ٹریک چھوڑ کرگئے ہیں اور ہم نے 70 سالوں میں صرف 600 کلومیٹر ٹریک بچھایا ہے جس سے حکومتوں کی ترجیحات کا تعین ہوتا ہے، ملک میں اربوں روپے کی زمین خالی پڑی ہے جس پر ناجائزقبضے کیے جا چکے ہیںہیں ، عمران خان کا ’میانوالی ریل کار‘ کی افتتاحی تقریب سے خطاب
اسلا م آباد:۔ وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اہم اجلاس میں آرمی چیف، ڈی جی آئی ایس آئی ، وزیر خارجہ ، سیکرٹری خارجہ و دیگر شریک ہیں

اسلا م آباد:۔ وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اہم اجلاس میں آرمی چیف، ڈی جی آئی ایس آئی ، وزیر خارجہ ، سیکرٹری خارجہ و دیگر شریک ہیں

اسلام آباد (این این آئی)وزیر اعظم عمران خان نے ’میانوالی ریل کار‘ کا افتتاح کردیا۔وزیر اعظم عمران خان نے ’میانوالی ریل کار‘ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ٹرین کا سفر عام آدمی کا سفر ہے اور جو حکومتیں عوام کا سوچتی ہیں وہ ہمیشہ اپنا ٹرین نیٹ ورک ٹھیک کرتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ انگریز ہمارے ملک میں 11 ہزار کلومیٹر ٹریک چھوڑ کرگئے ہیں اور ہم نے 70 سالوں میں صرف 600 کلومیٹر ٹریک بنایا ہے جس سے حکومتوں کی ترجیحات کا تعین ہوتا ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ وہ قومیں ترقی نہیں کرتیں جہاں چھوٹا طبقہ امیر ہو اور باقی لوگ غربت میں رہیں، مدینہ کی ریاست میں سرکار مدینہ نے عام آدمی کو اٹھایا تو دنیا کی امامت کرنے کےلئے قوم بن گئی۔ عمران خان نے کہا کہ چین 70 کروڑ لوگوں کو غربت سے نکال کر سپر پاور بن رہا ہے اور چین میں اسپیڈ سے ریل کا کام جاری ہے، سی پیک کے تحت ایم ایل ون کراچی سے پشاور تک بن رہا ہے جس سے ٹرین کا ٹائم بہت کم ہوجائے گا۔وزیراعظم نے کہا کہ ہم ہر روز قرضوں پر 6 ارب روپے سود دیتے ہیں ،اس ملک میں اربوں روپے کی زمین خالی پڑی ہے جس پر قبضے کیے ہوئے ہیں ، اسلام آباد میں قبضہ مافیا سے 100 ارب روپے کی زمین سے واگزار کرائی ہے۔عمران خان نے کہا کہ کراچی میں ریلوے کے پاس اتنی مہنگی زمین ہے جس سے ریلوے کا قرضہ اتارا جاسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ کچی آبادیوں اور غریب بستیوں کو نہیں چھیڑیں گے کیوں کہ حکومتوں نے ان کے لیے کچھ نہیں کیا ہے بلکہ ہم نے بڑے بڑے قبضہ مافیا پر ہاتھ ڈالنا ہے۔عمران خان نے کہا کہ وزیراعظم ہاو¿س میں ٹاپ کلاس یونیورسٹی بنارہے ہیں اور اس طرح کی شاہانہ عمارتوں پر 1100 کروڑ روپے خرچ کرتے ہیں، اگر ان عمارتوں پر 4 سالوں پیسہ نہ خرچ کریں تو شوکت خانم جیسا ماڈرن ہسپتال بنا سکتے ہیں۔یاد رہے کہ راولپنڈی اسٹیشن سے ’میانوالی ریل کار‘ صبح 7 بجے روانہ ہوگی اور 5 گھنٹوں میں منزل پر پہنچائے گی جب کہ میانوالی ریل کار راولپنڈی کے لیے دن 2 بجے روانہ ہوگی۔

Scroll To Top