ملک کی پہلی دفاعی لائن ،آئی ایس آئی ہے، عمران خان

  • حکومت اور عوام مسلح افواج اور انٹیلی جنس اداروں کے ساتھ مضبوطی سے کھڑے ہیں اور ان اداروں کی بے مثال کامیابیوں کو تسلیم کرتے ہیں،قومی سلامتی اور دہشت گردی کیخلاف جاری سازشوں کو جانفشانی سے ناکام بنانے پر ادارے کے کردار کے معترف ہیں ، وزیر اعظم
  • آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹر پہنچنے پر وزیر اعظم کا شاندار استقبال ،چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل نوید مختار کی آٹھ گھنٹے پر محیط طویل بریفنگ ،وزیراعظم اور کابینہ کے اراکین کو ملک کو درپیش اندرونی اور بیرونی چیلنجز سے آگاہی دی گئی ، یادگار شہدا ءپر چادر پوشی اور فاتحہ خوانی بھی کی

عمران خان کی بطور  وزیراعظم آفیشل تصویر جاریراولپنڈی(الاخبار نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ انٹر سروسز انٹیلیجنس (آئی ایس آئی) دنیا کی بہترین انٹیلی جنس ایجنسیز میں شمار ہوتی ہے جو ہماری پہلی دفاعی لائن ہے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹرز کا دورہ کیا جس کے دوران انہوں نے یاد گار شہداء پر پھول رکھے اور فاتحہ خوانی کی۔آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی نے وزیراعظم کا استقبال کیا۔اس موقع پر عمران خان نے کہا کہ حکومت اور عوام مسلح افواج اور انٹیلی جنس اداروں کے ساتھ مضبوطی سے کھڑے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت اور عوام ان اداروں کی بے مثال کامیابیوں کو تسلیم کرتے ہیں۔آئی ایس پی آر نے بتایا کہ دورے کے دوران وزیراعظم کو اسٹریٹیجک انٹیلی جنس اور نیشنل سیکیورٹی امور پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔وزیراعظم نے قومی سلامتی اور دہشت گردی کیخلاف جاری کوششوں پر آئی ایس آئی کے کردار کو سراہا۔ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹرز میں اعلیٰ سطحی اجلاس ہوا جس میں چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل نوید مختار نے آٹھ گھنٹے پر محیط طویل بریفنگ دی جبکہ وزیراعظم عمران خان نے اپنے دورے کے دوران یادگار شہدا پر پھولوں کی چادر چڑھائی اور فاتحہ خوانی کی ۔ وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات چوہدری فواد حسین کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے بدھ کو آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹرز کا دورہ کیا ۔چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل نوید مختار نے ہیڈ کوارٹر پہنچنے پر ان کا استقبال کیا۔ وزیراعظم نے آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹر میں ایک اجلاس کی صدارت کی جس میں وزیراعظم اور وفاقی وزراءکو آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی کی طرف سے آٹھ گھنٹے پر محیط طویل بریفنگ دی گئی۔ وزیر اطلاعات چوہدری فواد حسین کے مطابق اجلاس میں وزیراعظم اور کابینہ کے اراکین کو ملک کو درپیش اندرونی اور بیرونی چیلنجز سے آگاہ کیا گیا ۔ اس موقع پر وزیراعظم نے یاد گار شہداءپر پھولوں کی چادر چڑھائی۔ وزیر دفاع پرویز خٹک ، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر اطلاعات فواد حسین چوہدری اور وزیر مملکت برائے داخلہ شہر یار آفریدی وزیراعظم کے ہمراہ تھے ۔

Scroll To Top