افغانستان میں فورسز کی چوکیوں پر طالبان کے حملوں میں 30 اہلکار ہلاک

n

جنگجوؤں نے صوبہ بغلان میں 5 فوجی اور 8 پولیس چوکیوں پر قبضہ کرلیا فوٹو:فائل

کابل: افغانستان کے صوبے بغلان میں طالبان جنگجوؤں نے سیکیورٹی فورسز کی چوکیوں پر حملہ کر کے 30 اہلکاروں کو قتل کردیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق درجنوں طالبان جنگجوؤں نے افغانستان کے صوبے بغلان میں فوجی اور پولیس چوکیوں پر دھاوا بول دیا جس کے نتیجے میں 30 افغان سیکیورٹی اہلکار ہلاک ہو گئے۔

افغان سیکیورٹی حکام کا کہنا ہے کہ گزشتہ شب طالبان جنگجوؤں نے صوبہ بغلان کی 5 آرمی اور 8 پولیس چوکیوں پر قبضہ کرلیا ہے اور عام شہریوں کو بھی نشانہ بنایا تاہم سیکیورٹی اہلکاروں کی ہلاکتوں کے حوالے سے سرکاری سطح پر تصدیق نہیں کی گئی ہے۔

ادھر افغان صوبے بادغیس پولیس کے ترجمان نقیب اللہ امینی نے دعویٰ کیا ہے کہ ضلع ابکماری میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں طالبان کمانڈر مولوی نذیر اپنے دیگر 11 جنگجوؤں کے ہمراہ مارا گیا ہے۔

دوسری جانب کابل میں خود کش دھماکے میں 3 افراد ہلاک اور 14 سے زائد زخمی ہو گئے ہیں۔ خود کش دھماکا موٹر سائیکل سوار شخص نے افغان لیڈر احمد شاہ مسعود کی 17 ویں برسی میں شرکت کے لیے جانے والے قافلے پر کیا۔

Scroll To Top