سٹیٹس کو کیخلاف ایک اور سنگ میل عبور:قومی اسمبلی :اسد قیصر اسپیکر ، قاسم خان سوری ڈپٹی اسپیکر منتخب

  • پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار اسد قیصر 176 ووٹ لے کر قومی اسمبلی کے اسپیکر منتخب ،متحدہ اپوزیشن کے امیدوار سید خورشید شاہ نے 146 ووٹ حاصل کیے، کل 330 ووٹ کاسٹ کیے گئے جن میں سے 8 مسترد کردیے گئے
  • پی ٹی آئی کے قاسم خان سوری 183ووٹ لےکرڈپٹی اسپیکر منتخب ، متحدہ اپوزیشن کے اسدمحمودنے144ووٹ حاصل کر سکے، ڈپٹی اسپیکر کے انتخاب میں کل 328ووٹ کاسٹ ہوئے،ایک ووٹ مستردہوا،پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کا اعتماد کرنے پر شکر گزار ہوں، قاسم سوری کا انتخاب کے بعد اظہار خیال
اسلام آباد:۔ نو منتخب سپیکرقومی اسمبلی اسد قیصر نامزد وزیر اعظم عمران خان سے مصافحہ کررہے ہیں

اسلام آباد:۔ نو منتخب سپیکرقومی اسمبلی اسد قیصر نامزد وزیر اعظم عمران خان سے مصافحہ کررہے ہیں

اسلام آباد(الاخبار نیوز) پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار اسد قیصر قومی اسمبلی کے اسپیکر اور قاسم خان سوری ڈپٹی اسپیکر منتخب ہوگئے۔تفصیلات کے مطابق اسپیکر ایاز صادق کی زیر صدارت قومی اسمبلی کا اجلاس شروع ہوا۔ اجلاس کے آغاز میں 5 نو منتخب امیدواروں نے حلف اٹھایا۔اس کے بعد اسپیکر کے انتخاب کے لیے پولنگ کا عمل شروع ہوا جس میں پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار اسد قیصر 176 ووٹ لے کر قومی اسمبلی کے اسپیکر منتخب ہوگئے۔اسپیکر کے اہم ترین عہدے کے لیے پاکستان تحریک انصاف کے اسد قیصر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے خورشید شاہ کے درمیان سخت مقابلہ تھا۔اسپیکر کے لیے کل 330 ووٹ کاسٹ کیے گئے جس میں سے 8 مسترد کردیے گئے۔ پولنگ مکمل ہونے کے بعد ایک بار گنتی ہوجانے کے بعد پیپلز پارٹی کی شازیہ مری کی درخواست پر دوبارہ گنتی کی گئی۔حتمی نتائج کے مطابق متحدہ اپوزیشن کے امیدوار سید خورشید شاہ نے 146 ووٹ حاصل کیے۔بعد ازاں اسد قیصر کو حلف برداری کے لیے بلایا گیا۔ اس موقع پر مسلم لیگ ن کے مرتضیٰ عباسی نے احتجاجی تقریر کی جس کے ساتھ ہی اپوزیشن پنچوں سے ’ووٹ کو عزت دو‘ کے نعرے لگنے لگے۔حلف برداری کے دوران مسلم لیگ ن کے ارکان مسلسل میاں محمد نواز شریف کے حق میں نعرے لگاتے رہے۔ اس دوران پیپلز پارٹی اس احتجاج سے لاتعلق رہی۔اب اگلا مرحلہ ڈپٹی اسپیکر کے انتخاب کا ہے۔ کامیاب اسپیکر سے سبکدوش اسپیکر نے حلف لیا۔اسپیکر کے انتخاب کے دوران پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان رجسٹریشن اور شناختی کارڈ ساتھ لانا بھول گئے۔ پولنگ ایجنٹس کی رضا مندی سے عمران خان کو ووٹ کاسٹ کرنے دیا گیا۔ ڈپٹی اسپیکر کے لیے پی ٹی آئی کے قاسم خان سوری اور متحدہ اپوزیشن کے اسد محمود میں مقابلہ تھا،پی ٹی آئی کے قاسم خان سوری 183ووٹ لےکرڈپٹی اسپیکرقومی اسمبلی منتخب ہوئے، متحدہ اپوزیشن کے امیدواراسدمحمودنے144ووٹ حاصل کیے۔ ڈپٹی اسپیکر کے انتخاب میں 328ووٹ کاسٹ ہوئے،ایک ووٹ مستردہوا۔

Scroll To Top