غلام اکبر ٹویٹر پر!

twitter-logoٹویٹر لوگو ٹویٹ لوگویقین نہیں آرہا کہ یہ مسخرہ اسد عمر کا بھائی ہے۔جیسے خواجہ سعد رفیق کو دیکھ کر یقین نہیں آتا کہ اسی شخص نے اپنے آپ کو لوہے کا چنا قرار دیا تھا۔خواجہ صاحب کی موجودہ حالت دیکھ کر میرے خیال میں لوہا بھی بہت شرمندہ ہو رہا ہوگا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
منتخب سرداروں کی خواہشات پر مبنی نام نہاد جمہوری نظام کا خاتمہ آنکھوں سے دیکھنا اور سلطانءجمہور کے سورج کا استقبال کرنا میری باقیماندہ زندگی کا نصب العین ہے۔ون نیشن موومنٹ کے قیام کا خیال مجھے اسی مقصد کی تکمیل کے لئے آیا تھا۔ایک جنگ عوام جیت چکے ہیں دوسری بھی جیتیں گےا۔نشااللہ۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اس برانڈ کی جمہوریت کے میں کیوں خلاف ہوں اس کا جواب آپ کو وہ مشکلات دیکھ کر مل جا? گا جو ایک کروڑ 69لاکھ ووٹ لینے کے بعد بھی حکوت سازی میں عمران خان کو پیش آرہی ہیں۔اعداد و شمار پورے کرنے کے لئے جو جتن ہو رہے ہیں وہ عوامی مینڈیٹ کی تو ہین نہیں تو پھر اور کیا ہیں؟۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
بکنے والاہرقلم قوم کامجرم ہے-ہر فروخت ہونےوالی آواز نے قوم کے اعتمادکو بیدردی سے ذبح کیا ہے۔ملک میں صرف سیاسی و کاروباری مافیائیں سرگرم عمل نہیں۔میڈیا کے اندر زیادہ خطرناک اور تباہکن مافیائیں پروان چڑھ چکی ہیں۔اس کاروبار کو فروغ دینے کا سہرا بھی جاتی عمرہ کے گاڈفادر کے سر پر ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
انتخابی نتائج ہمارے ان صحافیوں پر بھی گراں گزرے ہیں جنہوں نے مال پکڑا ہوا تھا۔ضروری ہو گیا ہے کہ ایک تحقیقاتی کمیشن ایسے صحافیوں کو بے نقاب کرے اور انہیں قرار واقعی سزا دے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
شیاطین میں بھی یقینی طور پر علماءہونگے۔انہوں نے اپنے ایک عالم فاضل کو انسانی روپ میں پاکستان بھیجا ہوا ہے۔آج وہ اس وجہ سے سیخ پا نظر آیا کہ اس سے شیطانی سرگرمیوں میں مصروف رہنے والا پلیٹ فارم چھن گیا ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
میرا ذھن دسمبر2010 کی اس دوپہر کی طرف جا رہا ہے جب لال مسجد میں نماز جمعہ کے بعد آب پارہ میں امریکی ڈرون حملوں کے خلاف احتجاجی جلسہ کرنے والے تھے۔کافی انتظار کیا مگر لوگ جمع نہ ہو سکے۔آخر ہم جلسہ گاہ کی طرف چل پڑے عمران خان نے پہلی بار مایوس آواز میں کہا”لوگ کب باہر نکلیں گے؟“
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
بھائی عامرمتین۔۔۔آپ کی” نالائق “ پی ٹی آئی ہی پنجاب کی حکومت بنائے گی۔جوڑ توڑ کے ماہرشہباز شریف اب توڑ تو کرتے رہیں گے جوڑ کے قابل نہیں رہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
ڈاکٹر یاسمین راشد ہاریں نہیں ایک بڑی لیڈر بن کر ابھری ہیں پی ٹی آئی کو اس عظیم خاتون پر فخر ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
ہارنے والو اپنے بارے میں نہیں اپنے وطن کے بارے میں سوچنا۔جیتنے والو مت بھولنا اس مقصد کو جس کی تکمیل کے لئے خدا نے اور خلق خدا نے تمہیں کامران کیا ہے!۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
شہباز نے کہا ہے کہ انہوں نے ایسی خوفناک صورتحال نہیں دیکھی۔ایسا ہونا ہی تھا میاں صاحب۔ یہ پہلا موقع تھا کہ آپ کے لئے اپنی مرضی کی دھاندلی کرنا مشکل ہو گیا۔آپ کے ساتھ واقعی دھاندلی ہوئی ہے۔دھاندلی سے روکنے کی دھاندلی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اے قوم تم نے قائداعظم اور علامہ اقبال کی لاج رکھ لی۔تھینک یو۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
یہ گفتگو۳۳ برس قبل ہوئی تھی”میں نے کبھی ایسے شخص پر اعتماد نہیں کیا جسے میں نے خریدانہ ہواکبر صاحب “”ایک شخص کو آپ کبھی نہیں خرید سکیں گے میاں صاحب۔وہ شخص آپ کے سامنے کھڑا ہے“یہ گفتگو میں بھول نہیں سکا۔میاں صاحب ایک عرصے تک مجھے اپنی ٹیم میں شامل کرنے کے خواہشمند رہے مگر۔۔۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
وطن عزیز کے ازلی دشمن۔۔۔جتنے مرضی دھماکے کرالو۔۔۔جتنی مرضی سازشیں کر لو۔۔۔جتنے مرضی ایجنٹ بھرتی کر لو۔۔۔آج رات جو خبریں تمہارے کانوں سے ٹکرائیں گی وہ تمہارے گھر میں صف ماتم بچھادیں گی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Scroll To Top