نواز شریف، مریم نواز کی ہیلی کاپٹر کے ذریعے براہ راست اڈیالہ جیل منتقلی کا فیصلہ

  • ریلی کے باعث گرفتاری میں رکاوٹیں ڈالی جاسکتی ہیں ،امن و عامہ کی صورتحال بھی پیدا ہوسکتی ہے، متعلقہ اداروں سے ہیلی کاپٹر فراہمی کی درخواست
  • لاہور ہیڈ کوارٹر میں اہم اجلاس ،2 ٹیمیں اسلام آباد ،2 لاہور ایئر پورٹ پر تعینات کرنے کا فیصلہ

مریم نواز

لاہور ( این این آئی) ڈائریکٹر جنرل نیب لاہور شہزاد سلیم نے ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا پانے والے مسلم لیگ (ن ) کے قائد محمد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کو لاہور ائیر پورٹ سے گرفتار کر کے براہ راست اڈیالہ جیل منتقل کرنے کےلئے چیئرمین نیب کو خط لکھ دیا۔ نجی ٹی وی کے مطابق ڈی جی نےب کی جانب سے لکھے گئے خط مےں کہا گےا کہ نواز شریف اور مریم نواز کی آمد پر لاہور میں ریلی نکالی جائے گی اورریلی کے باعث نواز شریف اورمریم نواز کی گرفتاری میں رکاوٹیں ڈالیں جائیں گی جس سے امن و عامہ کی صورتحال پیدا ہونے کے بھی خدشات ہیں ۔ڈی جی نیب نے نواز شریف اور مریم نواز کو ائیر پورٹ سے ہی گرفتار کر کے اڈیالہ جیل منتقل کرنے کےلئے ہیلی کاپٹر فراہمی کی درخواست کی ہے ۔ مزید کہا گیاہے کہ یہ خط چیئرمین نیب کو موصول ہو گیا ہے اوراس سلسلہ میں وزارت داخلہ اور وزارت دفاع سے بذریعہ خط و کتاب ہیلی کاپٹر مانگا جائے گا۔ دریں اثناء نجی ٹی وی کے مطابق نیب ہیڈکوارٹر لاہور میں اہم اجلاس ہوا جس میں سابق وزیراعظم نواز شریف اور مریم نواز کی گرفتاری کے لیے 4 ٹیمیں تشکیل دینے پر غور کیا گیا، نیب کی 2 ٹیمیں اسلام آباد جبکہ 2 لاہور ایئر پورٹ پر تعینات کرنے پر مشاورت کی گئی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ نیب کی ایک ٹیم میں 6 سے 7 نیب کے اہلکار ہوں گے جبکہ پولیس کی مدد الگ ہوگی، نیب ٹیم میں ڈائریکٹر، ڈپٹی ڈائریکٹر عہدے کے افسران سمیت نیب آئی اینڈ ایس کے اہلکار بھی شامل کیے جائیں گے۔ مشاورت کے دوران نواز شریف اور مریم نواز شریف کی متوقع لاہور آمد پر انہیں ایئرپورٹ پر گرفتار کرنے کے بعد حج ٹرمینل سے باہر لانے پر بھی غور کیا گیا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف کے لاہور ایئر پورٹ پر لینڈ ہونے کے بعد انہیں اسلام آباد منتقل کرنے کے انتظامات پر بھی غور کیا گیا جبکہ کسی بھی ہنگامی صورتحال سے بچنے اور سکیورٹی کے پیش نظر بکتر بند گاڑی کا بھی انتظام کیا جائے گا، نوازشریف اور مریم نواز کو گرفتار کرنے کے بعد نیب لاہور کی حوالات منتقل کرنے اور بعد ازاں انہیں جیل منتقل کرنے کے انتظامات کو بھی حتمی شکل دی جا رہی ہے۔

Scroll To Top