پاکستان،ترکمانستان لازوال دوستی کے رشتے میں بندھے ہوئے ہیں،میجر جنرل(ر) حافظ منصور احمد

  • سی جی ایس ایس اور ترکمانستان ایمبیسی کے زیر اہتمام ”ترکمانستان: ہارٹ آف دی گریٹ سلک روٹ“ کے عنوان سے تقریب کا انعقاد
اسلام آباد:۔ سی جی ایس ایس اور ترکمانستان ایمبیسی کے اشتراک سے منعقدہ تقریب ”ترکمانستان: ہارٹ آف دی گریٹ سلک روٹ“ کے مہمانان گرامی سٹیج پر شریف فرما ہیں

اسلام آباد:۔ سی جی ایس ایس اور ترکمانستان ایمبیسی کے اشتراک سے منعقدہ تقریب ”ترکمانستان: ہارٹ آف دی گریٹ سلک روٹ“ کے مہمانان گرامی سٹیج پر شریف فرما ہیں

اسلام آباد(ریاض ملک) پاکستان اور ترکمانستان انتہائی دوستانہ تعلقات کی لڑی میں پروے ہوئے ہیں اوران تعلقات کی اہمیت کے پیش نظر ان کے زیادہ سے زیادہ فروغ کے خواہاں ہیں، ان خیالات کا اظہار سنٹر فار گلوبل اینڈ سٹریٹجک اسٹڈیز کے نائب صدر میجر جنرل(ر) حافظ منصور احمد نے ایک تقریب سے خطاب کے دوران کیا جس کا انعقاد سنٹر فار گلوبل اینڈ اسٹریٹجک اسٹڈیز اور ایمبیسی آف ترکمانستان نے مشترکہ طور پر کیا تھا ”ترکمانستان: ہارٹ آف دی گریٹ سلک روٹ“ کے عنوان سے منعقدہ تقریب کا مقصد ترکمانستان کا شاہراہ ریشم کے ایک اہم جزو کے طور پر اس کی اہمیت کو اجاگر کرنا تھا اس موقع پر ترکمانستان کے سفیر عزت مآب جناب عطا جان مولموف نے اپنے وطن کی تیز رفتار ترقی کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ ترکمانستان شاہراہ ریشم کو اقوام کے رابطوں کے ایک اہم ذریعے کی بدولت بہت اہمیت دیتا ہے تقریب سے ڈاکٹر محمود الحسن خان، ڈاکٹر ذوالفقار علی قریشی، عزت ستلی کولیو و دیگر نے بھی خطاب کیا اور شاہراہ ریشم کی اقوام کی ترقی اور رابطوں میں اہمیت پر سیر حاصل بحث کی۔

Scroll To Top