نواز شریف کا وطن واپسی کا اعلان…. مگر اہلیہ کے ہوش میں آنے کے بعد

  • پاکستان پہنچتے ہی نواز شریف ،مریم نواز کو ایئر پورٹ پرگرفتار کرلیا جائے گا، کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کیلئے خیبر پختونخوا پولیس سے رابطہ کیاجائےگا، وارنٹ گرفتاری کے حصول کے لئے ضروری کارروائی شروع
  • کوئی سیاسی پناہ نہیں لے رہا، فیصلے کے بعد مجھے جو آئینی اور قانونی حقوق حاصل ہیں وہ استعمال کروں گا،سزا کسی کرپشن پرنہیں دی گئی اور نہ ہی سزا سرکاری خزانے میں لوٹ مار کرنے پر دی گئی،نااہل وزیر اعظم کا دعویٰ

نواز شریف کا واپس نہ آنے کا اعلان

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ایون فیلڈ ریفرنس میں 11 سال کی سزا سنائے جانے کے بعد سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ نواز کے قائد نواز شریف نے وطن واپسی کا اعلان کردیا۔لندن میں صاحبزادی مریم نواز کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ وہ وطن واپس آرہے ہیں اور اپنی جدوجہد جیل سے بھی جاری رکھیں گے۔انہوں نے اپنے ووٹرز سے اپیل کی کہ 25 جولائی کو ووٹ دے کر ان کے خلاف ہونے والی سازشوں کو ناکام بنادیا جائے۔انہوں نے کہا کہ ووٹ کی چوری کو روکنے کی قیمت جیل ہے تو قیمت چکانے وطن واپس آرہا ہوں۔انہوں نے کہا کہ اہلیہ کے ہوش میں آتے ہی وطن واپس جاو¿ں گا، خواہش ہے کہ ان سے ایک بار بات کرلوں۔نواز شریف نے کہا کہ میری بیٹی اور میں ہاں میں ہاں نہیں ملاتے،ہم خوشامد نہیں کرتے اس لیے سزا دی گئی ہے۔سابق وزیراعظم نے کہا کہ مکروہ کھیل کا حصہ بننے والوں کوپچھتانا پڑے گا۔انہوں نے کہا کہ میں کوئی سیاسی پناہ نہیں لے رہا، فیصلے کے بعد مجھے جو آئینی اور قانونی حقوق حاصل ہیں وہ استعمال کروں گا۔نواز شریف نے ایون فیلڈ ریفرنس میں اپنے خلاف ہونے والے فیصلے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ سزا کسی کرپشن پرنہیں دی گئی اور نہ ہی سزا سرکاری خزانے میں لوٹ مار کرنے پر دی گئی۔دریں اثناءقومی احتساب بیورو (نیب) ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کو پاکستان آتے ہی گرفتار کرلیا جائے گا۔نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف اور مریم نواز کی ہوائی اڈے پر گرفتاری کی ہدایت دے دی گئی ہے جبکہ کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کیلئے خیبر پختونخوا پولیس سے رابطہ کیاجائےگا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کے لیے احتساب عدالت سے وارنٹ حاصل کرے گی جس کے بعد کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی گرفتاری عمل میں لائی جائے گی، اس حوالے سے نیب نے ایون فیلڈ فیصلے کی تصدیق شدہ نقل حاصل کرلی ہے۔ ادھر قومی احتساب بےور و(نےب ) لاہور کی ٹےم تفتےشی آفیسر عمران ڈوگر کی سربراہی میں ملزمان کی گرفتاری کے وارنٹ کے حصول کیلئے احتساب عدالت اسلام آباد پہنچ گئی ۔نےب ذرائع کے مطابق احتساب عدالت اسلام آباد کی جانب سے نوازشرےف ، مرےم نواز اور کےپٹن (ر) صفدر کے اریسٹ وارنٹ کے اجرا ہوتے ہی ملزمان کی گرفتاری کی کوششیں شروع کر دی جائینگی ۔ نیب لاہور کی ٹیم نے فیصلہ کی دستخط شدہ کاپی وصول کر لی ہے تاہم فیصلہ پر عمل درآمد کیلئے اریسٹ وارنٹ کے حصول کا انتظارہے ۔ جبکہ نیب کیجانب سے وزارت داخلہ کو ملزمان کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی درخواست جلد ہی دوبارہ ارسال کر دی جائیگی۔

Scroll To Top