سیاستدانوں کے اثاثوں کی تفصیلات منظر عام پر، کوئی ارب پتی تو کوئی کروڑ پتی

  • علیم خان کے اثاثوں کی کل مالیت 91 کروڑ 82 لاکھ ‘ ایک ارب روپے کے مقروض ‘ ایاز صادق کے اثاثوں کی مالیت 4 کروڑ 47 لاکھ
  • جام خان شورو کے اثاثوں کی مالیت صرف 5 کروڑ 63 لاکھ‘262 ایکڑ زرعی زمین کے مالک ‘مالیت محض 37 لاکھ روپے

سیاستدانوں کے اثاثوں کی تفصیلات منظر عام پراسلام آباد (الاخبار نیوز)انتخابات میں حصہ لینے کے لیے سیاستدانوں پر اپنے اور اپنے گھر والوں کے اثاثوں کی تفصیلات جمع کروانے کی پابندی کے بعد سیاستدانوں کے اثاثے سامنے آنے کا سلسلہ جاری ہے۔جام خان شورو کے ظاہر کیے گئے اثاثوں کی مالیت صرف 5 کروڑ 63 لاکھ 3 ہزار 566 ہے۔جام خان شورو 262 ایکڑ زرعی زمین کے مالک ہیں جس کی مالیت محض 37 لاکھ 50 ہزار ہے۔ ان کی اہلیہ کے نام پر 15 لاکھ روپے کی ایک زمین ہے۔سابق صوبائی وزیر کا 2 کروڑ 50 لاکھ روپے مالیت کا ایک سی این جی اسٹیشن، 50 تولہ سونا، جو انہیں کسی نے تحفے میں دیا۔ اس کے علاوہ جام خان شورو کے پاس 2 کروڑ 30 لاکھ روپے سے زائد نقد بھی ہیں جو ان کے چار مختلف بینک اکاﺅنٹس میں موجود ہیںمخدوم رفیق الزماں نے کل اثاثوں کی مالیت 16 کروڑ سے زائد ظاہر کی ہے، وہ 5 کروڑ روپے سے زائد مالیت کی ملکی وغیر ملکی جائیداد کے مالک ہیں۔مخدوم رفیق الزماں کی جائیدادیں، ہالا، کراچی، راولپنڈی، اسلام آباد، حیدرآباد، ٹھٹھہ میں ہے۔ اس کے علاوہ ان کا لندن میں ساڑھے 3 کروڑ روپے مالیت کا فلیٹ بھی ہے۔ان کی ظاہر کی جانے والی جائیداد میں اکثر بیٹے اور اہلیہ کے نام ہیں۔مخدوم رفیق الزماں کے حلف نامہ میں شیئرز اور انشورنس کی مد میں 20 لاکھ روپے کی انویسٹمنٹ ظاہر کی گئی ہے۔مخدوم رفیق الزماں نے 30 لاکھ روپے مالیت کی تین گاڑیاں ظاہر کی ہیں، اس کے علاوہ ان کے پاس 9 کروڑ روپے سے زائد نقدی بھی ہے۔مخدوم رفیق الزماں کے غیر ملکی اکاﺅنٹ میں 1 لاکھ پاﺅنڈز، اور ملک میں چار بینکوں میں 28 لاکھ 97 ہزار سے زائد کی رقم موجود ہے۔تحریک انصاف پنجاب کے صدر علیم خان کے اثاثوں کی تفصیلات سامنے آگئیں جس کے مطابق ان کے اثاثوں کی کل مالیت 91 کروڑ 82 لاکھ سے زائد ہے جب کہ وہ ایک ارب روپے کے مقروض ہیں۔دستاویزات کے مطابق علیم خان کے کل اثاثوں کی مالیت 91 کروڑ 82 لاکھ 78 ہزار 855 روپے ہے، ان کے پاس ذاتی پراپرٹی کی مالیت 15 کروڑ 92 لاکھ 75 ہزار 737 روپے ہے، وہ 3 کروڑ 47 لاکھ 21 ہزار 652 روپے مالیت کی بیش قیمت گاڑیوں کے مالک ہیں جن میں 3 لینڈ کروزر اور ایک ہنڈا سوک ہے۔دستاویزات میں ظاہر کیے گئے اثاثوں میں علیم خان کے پاس 9 لاکھ 94 ہزار 760 روپے کی جیولری موجود ہے جب کہ ان کے پاس نقد 9 لاکھ 35 ہزار 200 روپے اور بینک میں 6 کروڑ 40 لاکھ 82 ہزار 21 روپے ہیں۔ستاویزات کے مطابق علیم خان کا پاکستان میں صرف 90 ہزارروپے کا کاروبار ہے، ان کا بیرون ملک کاروبار کا سرمایہ 81 لاکھ 38 ہزار 5 روپے ہے جب کہ ان کے پاس موجود لاکھوں شیئرز کی مالیت 12 کروڑ 93 لاکھ 53 ہزار 990 روپے ہے۔اس کے علاوہ علیم خان نے اپنی ہی بنائی ہوئی کمپنی سے 69 کروڑ 97 لاکھ 4 ہزار 306 روپے بطور قرض لیے، ان کی پاکستان میں 43 جب کہ بیرون ملک 3 کمپنیاں رجسٹرڈ ہیں۔دستاویزات کےمطابق پی ٹی آئی رہنما نے 2015 تا 17 تنخواہ اور منافع کی مد میں 4 کروڑ 39 لاکھ 5 ہزار 799 روپے کمائے، تین سال میں ایک کروڑ 2 لاکھ 77 ہزار 914 روپے ٹیکس دیا، وہ ایک ارب 21 کروڑ 86 لاکھ 32 ہزار 281 روپے کے مقروض ہیں۔پی ٹی آئی رہنما کے موجودہ اثاثوں میں 41 کروڑ 7لاکھ 10 ہزار 277 روپے کا اضافہ ہوا، ان کے پاس موجودہ فرنیچر کی مالیت 19 لاکھ 60 ہزار روپے ہے جب کہ انہوں نے بیرون ممالک 23 دورے کیے جن پر 21 لاکھ 65 ہزار روپے اخرجات آئے۔ اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق اور سابق وزیر دفاع خرم دستگیر کے اثاثوں کی تفصیلات سامنے آگئیں۔دستاویزات کے مطابق ایاز صادق کے اثاثوں کی مالیت 4 کروڑ 47 لاکھ 95 ہزار 914 روپے ہے جب کہ گزشتہ مالی سال تک اثاثوں کی مالیت 4 کروڑ 23 لاکھ 39 ہزار 280 روپے تھی۔دستاویز میں بتایا گیا ہے کہ ایاز صادق کے 3 گھروں کی مالیت 3 کروڑ 66 لاکھ 99 ہزار 682 روپے ہے۔ایازصادق نے قومی اسمبلی کی تنخواہ اور جائیداد کے کرائے کو ذرائع آمدن میں ظاہر کیا ہے اور دستاویز کے مطابق قومی اسمبلی سے 2014 سے 2017 تک 63 لاکھ 99 ہزار 370 روپےآمدن ہوئی ہے۔اسپیکر قومی اسمبلی ایازصادق کے 3 بینک اکاو¿نٹس میں 2 لاکھ57 ہزار 23 روپے ہیں۔دستاویز کے مطابق ایازصادق کی بیوی کے نام 2 گھروں کی مالیت 2 کروڑ 68 لاکھ 12 ہزار170 روپےہے جب کہ ان کی اہلیہ کے نام جڑانوالہ میں 47.3 ایکڑ کی وراثتی جائیداد اور 10 کنال زمین فتح جنگ اٹک میں بھی ہے۔دستاویز میں ایاز صادق اور ان کی اہلیہ کے نام حصص کی مالیت 57 لاکھ 95 ہزار 361 روپے ہے جب کہ ان کی اہلیہ کے 6 بینک اکاو¿نٹس میں 1کروڑ 40 لاکھ روپے ہیں۔دستاویز کے مطابق ایاز صادق کی اہلیہ کے نام فرنیچر کی مالیت میں 80 ہزار روپے ہیں اور ان کے پاس 40 تولے متفرق زیورات کی مالیت 80 ہزار روپے ہے۔ دستاویزات میں ایاز صادق کی اہلیہ نے عدنان نامی شخص کو 1 کروڑ 30 لاکھ روپے قرض دیا ہوا ہے۔خرم دستگیر کے اثاثوں کی مالیت ایک کروڑ 28 لاکھ دوسری جانب سابق وزیر دفاع خرم دستگیر نے دستاویزات میں اپنے اثاثوں کی مالیت ایک کروڑ 28 لاکھ روپے بتائی ہے، ان کے 2 بینک اکاو¿نٹس میں 37 لاکھ 39 ہزار روپے ہیں جب کہ خرم دستگیر ایک کار اور 200 گرام سونے کے بھی مالک ہیں۔سابق وزیر دفاع سیالکوٹی دروازے کے قریب سینما کے ایک تہائی حصے دار ہیں، وہ جی ٹی روڈ پر واقع کلاتھ مارکیٹ میں بھی ایک تہائی حصےکے مالک ہیں۔دستاویزات کے مطابق خرم دستگیر کو سیٹلائٹ ٹاو¿ن میں واقع گھر والد کی طرف سے بطور تحفہ ملا، ان کو ڈی سی کالون میں بیوی کی طرف سے پلاٹ بھی بطور تحفہ ملا۔

Scroll To Top