بھارتی شرانگیزی؛ پاکستانی سفارتکار کو انتہائی مطلوب افراد کی فہرست میں شامل کردیا

hاین آئی اے کا عامر زبیر سمیت دیگر دو افراد کے ریڈ کارنر نوٹس جاری کرنے کے حوالے سے انٹرپول سے رابطہ فوٹو: فائل

لاہور: بھارت نے پاکستان کو عالمی برادری میں بدنام کرنے کے لیے ایک اور گھناؤنی سازش کرتے ہوئے سری لنکا میں پاکستانی سفارتکار کو انتہائی مطلوب افراد کی لسٹ میں شامل کردیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق بھارتی تحقیقاتی ایجنسی ’’این آئی اے‘‘ نے دعوی کیا ہے کہ سری لنکا کے دارالحکومت کولمبو میں پاکستانی سفارت خانے میں تعینات ویزا قونصلر عامر زبیر صدیقی جنوبی بھارت میں امریکا اور اسرائیلی قونصل خانوں پر ممبئی طرز کے حملوں کی پلاننگ کررہے تھے۔ این آئی اے کا دعوی ہے کہ عامر زبیر صدیقی جو 2009 سے 2016 تک پاکستانی سفارتخانے میں تعینات رہے، وہ ممبئی طرز حملوں کی پلاننگ کررہے تھے۔ این آئی اے نے عامر زبیر صدیقی سمیت دیگر دو نامعلوم افراد کی تصاویر انتہائی مطلوب افراد کی فہرست میں شامل کی ہیں جن کے بارے میں دعوی کیا گیا ہے کہ وہ دونوں بھی پاکستانی ہیں۔ ان دو افراد میں سے ایک کی عرفیت ونیتھ جبکہ دوسرے کا نام شاہ بتایا گیا ہے۔

ایجنسی کا دعوی ہے کہ عامر زبیر صدیقی نے سری لنکا میں مقامی گروپ کو حملوں کا ٹاسک دیا تھا، تاہم اس گروہ کے کئی ارکان پکڑے گئے۔ ان میں سے ایک کا نام ذاکر حسین بتایا گیا ہے، ذاکر حسین نے تحقیقات کے دوران اس بات کا انکشاف کیا کہ انہیں عامر زبیر نے جنوبی ہندوستان کے علاقے چنئی میں امریکا اور اسرائیل کے سفارتخانوں پر حملوں کا ٹاسک دیا تھا۔ سفارتخانوں کے لیے شادی ہال جبکہ حملوں آوروں کےلیے باورچی کا کوڈ استعمال کیاجانا تھا۔

ایجنسی نے یہ بھی دعوی کیا ہے کہ اس حوالے سے اہم معلومات امریکا کی طرف سے فراہم کی گئی تھیں جس کے بعد این آئی اے متحرک ہوئی اور سری لنکن گروہ پکڑاگیا۔ این آئی اے نے عامر زبیر سمیت دیگر دو افراد کے ریڈ کارنر نوٹس جاری کرنے کے حوالے سے انٹرپول سے رابطہ کیا ہے۔

Scroll To Top