وینزویلا میں تھانے سے فرار کیلئے لگائی گئی آگ سے 68 قیدی ہلاک

jپولیس اسٹیشن میں آگ لگنے کے واقعے میں 68 قیدیوں کی ہلاکت کے بعد لواحقین نے تھانے پر حملہ کردیا۔ فوٹو : فائل

وینزویلا: وینزویلا کے ایک پولیس اسٹیشن میں لگنے والی آگ سے 68 قیدی جل کر خاکستر ہوگئے۔

بین الاقوامی خبر رساں ایجنسی کے مطابق وینزویلا کے شہر ویلینشیا کے ایک مقامی تھانے سے فرار ہونے کےلیے کچھ قیدیوں نے وہاں بچھائے گئے گدوں کو آگ لگادی تاکہ دھوئیں اور ایمرجنسی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے جیل سے فرار ہونے میں آسانی رہے۔ تاہم پولیس نے قیدیوں کو منشتر کرنے کےلیے شیلنگ کی جس کے نتیجے میں آگ مزید بھڑک اُٹھی اور 68 قیدی ہلاک ہوگئے۔

وینزویلا میں جیلوں کی صورتِ  حال پر نظر رکھنے والے ادارے کا کہنا ہے کہ پولیس اسٹیشن میں موجود ایک قیدی نے فائر کرکے ایک پولیس افسر کی ٹانگ زخمی کردی جس کے فوراً بعد دوسرے قیدیوں نے لاک اپ میں بچھائے گئے گدوں کو آگ لگادی جو بڑی تیزی سے پھیل گئی۔

واقعے کی اطلاع ملتے ہی قیدیوں کے لواحقین کی بڑی تعداد پولیس اسٹیشن کے باہر جمع ہوگئی۔ مظاہرین نے پولیس کے خلاف نعرے بازی کی اور ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا۔ مظاہرین کا کہنا ہے کہ تھانے میں حفاظتی اقدام نہ ہونے کے باعث ہلاکتوں میں اضافہ ہوا۔ اگر بروقت امدادی کاموں کا آغاز کیا جاتا تو اتنے بڑے پیمانے پر جانی نقصان نہیں ہوتا۔

پولیس افسر جیسس سینٹینڈر نے بین الااقوامی میڈیا کو بتایا کہ ان قیدیوں کی اکثریت دم گھٹنے کے باعث ہلاک ہوئی جب کہ مظاہرین سے جھڑپ کے دوران ایک پولیس اہلکار بھی ہلاک ہوا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ہم تھانے میں آگ لگنے اور مظاہرین کے پُرتشدد ہنگامے کی تحقیقات کررہے ہیں جس کے بعد غفلت برتنے والے اہلکاروں کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

Scroll To Top