اقتدار میں آ کر سب سے پہلے ریاستی اداروں کو ٹھیک کریں گے، عمران خان

  • سینیٹ کے ایک ٹکٹ کےلئے 40 کروڑ روپے کی پیشکش ہوئی،وزیراعظم اور وزیراعلیٰ کے پاس صوابدیدی فنڈ نہیں ہونا چاہئے
  • سرمایہ دارانہ نظام کے خلاف ہوں اور اسلامی فلاحی ریاست پر یقین رکھتا ہوں،میاں صاحب! ساتھ چلیں دکھاتا ہوں درخت کہاں لگے ہیں،تقریب سے خطاب
اسلام آباد، چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کورگروپ اجلاس کی صدارت کر رہے ہیں

اسلام آباد، چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کورگروپ اجلاس کی صدارت کر رہے ہیں

اسلام آباد (این این آئی)پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہاہے کہ اگر ان کی جماعت اقتدار میں آئی تو ان کا سب سے پہلا کام ریاستی اداروں کو ٹھیک کرنا ہوگا۔وکلاءکی تقریب سے خطاب میں چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ جمہوریت میں ادارے ہوتے ہیں، احتساب ہوتا ہے ¾ اقتدار میں آکر سب سے پہلے اداروں کو مضبوط کریں گے۔عمران خان نے ایک بار پھر یہ دعویٰ کیا کہ انہیں سینیٹ کے ایک ٹکٹ کےلئے 40 کروڑ روپے کی پیشکش ہوئی۔چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ جمہوریت میں بجٹ ہوتا ہے، وزیراعظم اور وزیراعلیٰ کے پاس صوابدیدی فنڈ نہیں ہوتا، میں سرمایہ دارانہ نظام کے خلاف ہوں اور اسلامی فلاحی ریاست پر یقین رکھتا ہوں۔نواز شریف عدلیہ مخالف مہم چلارہے ہیں، عمران خانعمران خان نے کہا کہ ملک پ±لوں یا سڑکوں سے نہیں بنتے بلکہ تعلیم سے بنتے ہیں، پنجاب میں اس وقت تک کچھ نہیں ہوسکتا جب تک رائے ونڈ سے حکم جاری نہ ہو، رائے ونڈ کے حکم کے بغیر کوئی ایس ایچ او بھی تعینات نہیں ہوسکتا۔انہوں نے کہا کہ بادشاہ ٹیکس کے پیسے کا غلط استعمال کرتا ہے، جمہوریت میں ایسا نہیں ہوتا، کس نے اجازت دی کہ عوام کا پیسہ اس طرح خرچ کریں۔عمران خان نے کہا کہ ان کے نظریاتی رول ماڈل علامہ اقبال جبکہ سیاسی رول ماڈل قائد اعظم محمد علی جناح ہیں۔خیبر پختونخوا میں بلین ٹری سونامی منصوبے کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ آئندہ نسلوں کےلئے دو چیلنجز سامنے آرہے ہیں ¾آلودگی اہم مسئلہ ہے جس سے اوسط زندگی کم ہو رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ کے پی حکومت نے ایک ارب سے زائد درخت لگائے ہیں جس پر میں کے پی حکومت کو مبارکباد دیتا ہوں، ڈبلیوڈبلیو اونے دومرتبہ لگائے گئے درختوں کا آڈٹ کیا ہے لیکن میاں صاحب کو درخت نظر نہیں آرہے۔عمران خان نے کہا کہ میاں صاحب! میرےساتھ چلیں، میں دکھاتاہوں درخت کہاں لگے ہیں۔چیئرمین تحریک انصاف نے دعویٰ کیا کہ ماہراقتصادیات حفیظ پاشا کے مطابق خیبر پختونخوا میں معاشی شرح نمو5 فیصد ہے جو دیگر صوبوں کے مقابلے میں زیادہ ہے۔انہوں نے کہا کہ وہ میرٹ پر لوگوں کو لائیں کے جس سے ادارے ٹھیک ہوجائیں گے۔

Scroll To Top