پڑوسیوں سے بہتر تعلقات کیلئے فارن پالیسی کو ری وزٹ کرنا ہو گا، سید خورشید شاہ

  • نواز شریف اپنی جگہ مریم نواز کو لانا چاہتے ہیںکیونکہ جلسوں میں وہ ان کے بعد تقریر کرتی ہیں
  • عامر باکسرکا اوپن ٹرائل چلنا چاہیے ،گالم گلوچ اور تیز باتیں کر نے والا مقبول ہونے کی کوشش کرتا ہے ، ایم کیو ایم کی لڑائی مفادات کی جنگ ہے،میڈیا سے گفتگو

خورشید شاہ

سکھر (این این آئی)قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید احمد شاہ نے کہا ہے کہ چوہدری نثار کو اختلافات پارٹی میں حل کرنا چاہئیںڈان لیکس کی رپورٹ منظر عام پر لانا بلیک میلنگ ہوگی ،گالم گلوچ اور تیز باتیں کر نے والا مقبول ہونے کی کوشش کرتا ہے ، ایم کیو ایم کی لڑائی مفادات کی جنگ ہے ، لاہور کو صرف باہر سے سرخی پاو¿ڈر لگا ہوا ہے اندر سے ٹوٹا ہوا ہے ،عدالت کا احترام کرتا ہوں ،عامر باکسر پر اوپن ٹرائل کیس چلنا چاہیے ، پی ٹی آئی نے ارب پتی لوگوں کو سینیٹ کے ٹکٹ دیئے ہیں سینٹ انتخابات میں پاکستان پیپلز پارٹی بھرپور مقابلہ کریگی۔اتوار کو اپنی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سید خورشید احمد شاہ نے کہا کہ 1947 سے 2013 تک 13 ہزار ارب لون لیا گیا، 2013 سے 2018 تک 21 ہزار ارب لون لیا گیا ،عامر باکسر پر اوپن ٹرائل کیس چلنا چاہیے ،ہمیں اپنی فارن پالیسی کو ری وزٹ کرنا پڑےگاہم نے افغانستان کے 35 لاکھ لوگوں کو 30 سال پاکستان میں رکھا ہے انہوں نے کہاکہ نواز شریف اپنی جگہ مریم نواز کو لانا چاہتے ہیںکیونکہ جلسوں میں بھی مریم نوازشریف کے بعد تقریر کرتی ہیںسید خورشید احمد شاہ نے کہا کہ چوہدری نثار کو اختلافات پارٹی میں حل کرنا چاہئیںڈان لیکس کی رپورٹ منظر عام پر لانا بلیک میلنگ ہوگی اگرچوہدری نثار کے اختلافات ہیں تو پارٹی چھوڑ دیںاپنے اختلافات ظاہر کرنا اپنی تشہیر کرانے کے مترادف ہے ۔انہوں نے پاکستان تحریک انصاف پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی نے ارب پتی لوگوں کو سینیٹ کے ٹکٹ دیئے ہیں سینٹ انتخابات میں پاکستان پیپلز پارٹی بھرپور مقابلہ کریگی۔

Scroll To Top