فلیگ شپ ضمنی ریفرنس: نواز شریف آج نیب راولپنڈی میں طلب

  • جمعہ کو سابق وزیراعظم کو باقاعدہ نوٹس بھی بھجوادیا گیا، نیب نے نواز شریف کےخلاف ایک اور ضمنی ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا ہے ، اس سلسلے میں انہیں راولپنڈی آفس طلب کیا گیا ہے
  • ایک ضمنی ریفرنس پہلے ہی دائر ہے‘ نیب نے یہ فیصلہ برطانیہ سے حاصل شواہد پر کیاہے جس میں نوازشریف کیخلاف نئے گواہوں کے بیانات قلمبندہوں گے اور نیب ان سے ضمنی ریفرنس فلیگ شپ پربیان لے گی
  • خیال رہے کہ ایون فیلڈ ضمنی ریفرنس میں نیب کی جانب سے جمع کرائی گئی تحقیقاتی رپورٹ میں نواز شریف، حسین و حسن نواز، مریم نواز اور کیپٹن صفدر کرپشن میں ملوث پائے گئے ہیں
نواز شریف آج نیب راولپنڈی میں طلب

نواز شریف آج نیب راولپنڈی میں طلب

راولپنڈی(این این آئی)نیب راولپنڈی نے سابق وزیراعظم نوازشریف کو فلیگ شپ ضمنی ریفرنس میں (آج) ہفتہ کوطلب کرلیاہے۔اس سلسلے میں جمعہ کو سابق وزیراعظم کو باقاعدہ نوٹس بھی بھجوادیاہے۔نجی ٹی وی نے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ نیب راولپنڈی نے مسلم لیگ نون کے سربراہ سابق وزیراعظم میاں محمدنوازشریف کو فلیگ شپ ضمنی ریفرنس کی تفتیش میں طلب کیاہے۔ نیب نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف ایک اور ضمنی ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا ہے ، اس سلسلے میں انہیں کل راولپنڈی آفس طلب کیا گیا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق نیب نے یہ فیصلہ برطانیہ سے حاصل شواہد پر کیاہے جس میں نوازشریف کیخلاف نئے گواہوں کے بیانات قلمبندہوں گے اور نیب ان سے ضمنی ریفرنس فلیگ شپ پربیان لے گی، نیب نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف ایک اور ضمنی ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا ہے ، اس سلسلے میں انہیں کل راولپنڈی آفس طلب کیا گیا ہے . میڈیا رپورٹس کے مطابق نیب نے یہ فیصلہ برطانیہ سے حاصل شواہد پر کیاہےجبکہ یہ ریفرنس العزیزیہ اور فلیگ شپ کیس میں دائرکیے جائیں گے جوآئندہ ہفتے احتساب عدالت میں دائرکئے جائیں گے۔واضح رہے نوازشریف کیخلاف لندن فلیٹس کیس میں ضمنی ریفرنس پہلے ہی دائرہے۔دوسری جانب ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ سابق نااہل وزیراعظم نے راولپنڈی بیورو کے سامنے پیش نہ ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ واضح رہے کہ نوازشریف کے خلاف لندن فلیٹس کیس میں ضمنی ریفرنس دائر کیا جاچکا ہے۔خیال رہے کہ ایون فیلڈ ضمنی ریفرنس میں نیب کی جانب سے جمع کرائی گئی تحقیقاتی رپورٹ میں نواز شریف، حسین و حسن نواز، مریم نواز اور کیپٹن صفدر کرپشن میں ملوث پائے گئے ہیں.تفصیلات کے مطابق یہ انکشافات شریف خاندان کی ایون فیلڈ میں فلیٹس کی خریداری سے متعلق نیب کی تحقیقاتی رپورٹ میں کیے گئے ہیں جب کہ رپورٹ میں مبینہ جعلی بیانِ حلفی جمع کرانے پرطارق شفیع کے خلاف کارروائی کی سفارش بھی کی گئی.رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ لندن فلیٹس کی خریداری اور نوازشریف کی ظاہری آمدن میں کوئی مطابقت نہیں ہے جب کہ یہ امر بھی قابل غور ہے کہ نواز شریف نے ایون فیلڈز کی جائیداد عوامی عہدہ رکھتے ہوئے خریدی۔ نیب رپورٹ کے متن مطابق شواہد سے ثابت ہوا ہے کہ ٹرسٹ ڈیڈ پر کیپٹن ریٹائرڈ صفدر نے بھی دستخط کیے ہیں جب کہ سابق وزیراعظم کی صاحبزادی مریم نواز اور دونوں صاحبزادوں حسن و حسین نواز نے جعلی ٹرسٹ ڈیڈ عدالت میں جمع کرائے۔

Scroll To Top