بھارتی شر انگیزی کا مؤثر جواب دیا جائے گا: کور کمانڈرز

  • عسکری قیادت کا بھارت کی جانب سے بڑھتی ہوئی سیز فائر لائن کی خلاف ورزیوں پر اظہار تشویش ،علاقائی امن واستحکام کےلئے سٹیک ہولڈرز سے تعاون کے دور ان قومی مفاد کوبہرحال مقدم رکھا جائے
  • سکیورٹی سے متعلق امریکی پالیسیوں کے تناظر میں صورتحال پر غور ،دہشتگردی کے خلاف کئی سال کی کوششوں کو مستحکم بنانے کے عزم کا اعادہ ،آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی زیر صدارت کور کمانڈرز کانفرنس
راولپنڈی، چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ 208ویں کورکمانڈرز کانفرنس کی صدارت کر رہے ہیں

راولپنڈی، چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ 208ویں کورکمانڈرز کانفرنس کی صدارت کر رہے ہیں

راولپنڈی (این این آئی)عسکری قیادت نے بڑھتی ہوئی سیز فائر کی بھارتی خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے واضح کیا ہے کہ کسی بھی بھارتی مہم جوئی کا بھرپور جواب دیا جائیگا ، علاقائی امن واستحکام کےلئے سٹیک ہولڈرز سے تعاون کے دور ان قومی مفاد کو مقدم رکھا جائے ۔ بدھ کوآئی ایس پی آر کے مطابق 208ویں کور کمانڈر کانفرنس بدھ کو جی ایچ کیو میں چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ کی زیر صدارت منعقد ہوئی ۔کانفرنس کے دور ان جیو سٹریٹجک اور سکیورٹی ماحو ل بالخصوص خطے کےلئے سکیورٹی سے متعلق امریکی پالیسیوں کے تناظر میں صورتحال کا جائزہ لیا گیا ۔آپریشن ردالفساد پر پیشرفت اور بھارت کی جانب سے سیز فائر کی خلاف ورزیوں میں اضافے کے معاملے پر بھی غور کیا گیا۔کور کمانڈرزنے کئی سالوں سے انسداد دہشتگردی کےلئے کی جانے والی کوششوں کو مستحکم بنانے کے عزم کا اعادہ کیا تاکہ پاکستان اور خطے دونوں کےلئے پائیدار امن اور استحکام حاصل ہو سکے ۔اجلاس کے شرکاءنے کہاکہ بھارت کی جانب سے سیز فائر کی خلاف ورزیاں امن کےلئے نقصان دہ ہیں تاہم ان خلاف ورزیوں یا کسی بھی بھارتی مہم جوئی کا موثر انداز میں جواب دیا جائیگا ۔اجلاس کے شرکاءنے کہا کہ علاقائی امن اور استحکام کےلئے دیگر سٹیک ہولڈر زکے ساتھ تعاون کے عمل کے دور ان قومی مفاد کو مقدم رکھا جائے ۔

Scroll To Top