میرا قلم بہک کر کشمیر سے نواز شریف کی طرف چلا گیا ہے۔ اور یہ شاید اس لئے ہوا ہے کہ یہ شخص اب داستانِ پارینہ بننے والا ہے۔

وطن تیری جنت میں آئیں گے اک دن
لڑکپن سے آج تک یہ ترانہ میرے شعور میں گونج رہا ہے۔
میں کشمیری نہیں ہوں مگر میں مسلمان ہوں۔ اور مسلمان نہ تو کوئی کشمیری ہوتا ہے نہ ہی پنجابی، نہ ہی سندھی نہ ہی بلوچی، نہ ہی پختون اور نہ ہی ترک و عرب وغیرہ۔ مسلمان صرف مسلمان ہوتا ہے۔ قرآن میں اللہ تعالیٰ جب ہم سے مخاطب ہوتا ہے تو اپنے حبیب اور آخری نبی(صلی اللہ علیہ وسلم)کی امت کی حیثیت سے مخاطب ہوتا ہے۔
اور مجھے فخرہے کہ میں آپ( صلی اللہ علیہ وسلم)کا ایک حقیر امّتی ہوں۔۔۔اور جس طرح پنجاب، کے پی کے، بلوچستان اور سندھ میرا دیس ہے اسی طرح کشمیر بھی میرادیس ہے۔
یہ ترانہ مجھے یاد دلاتا ہے کہ ابھی پاکستان مکمل نہیں ہوا۔ پاکستان کی شہ رگ آج بھی بھارتی سنگینوں کی زد میں ہے۔
ہماری بدقسمتی یہ ہے کہ ہم وہ عہد بھول گئے جو قائداعظم(رحمتہ اللہ علیہ) نے ہم سے لیا تھا۔ قائد اعظم(رحمتہ اللہ علیہ) سے ہم نے عہد کیا تھا کہ ہم اپنی شہ رگ بھارتی سنگینوں سے ضرور آزاد کرائیں گے۔
آج ہمارے تمام لیڈروں کی ترجیحات میں سب سے آخری ترجیح کشمیر ہے۔
گذشتہ کئی دہائیوں سے جو لیڈر ہم پر مسلط رہے ہیں ان کی ترجیحات کیا تھیں اور ہیں آپ جانتے ہیں۔
یہ مبالغے کی بات نہیں کہ ہمارے دو حکمران خاندانوں کے پاس ملک سے دوگنا زیادہ دولت ہے۔
ان میں سے ایک حکمران ایسا ہے جسے ڈوب مرنے کے لئے یہی احساس کافی ہونا چاہئے کہ اس ملک کے کروڑوں عوام غربت کی لکیر سے نیچے زندگی بسر کر رہے ہیں اور اس کا صرف ایک بیٹا لندن میں آٹھ ارب روپے کے گھر میں رہتا ہے۔
مگر اب شاید یہ لوگ اللہ کی پکڑ میں واقعی آچکے ہیں۔ ورنہ ان کی بے انداز دولت اب تک وہ ”انصاف “ خرید چکی ہوتی جو اُن سے روٹھ چکا ہے۔
جج بِکنے کے لئے تیار نہیں۔
اور میاں نواز شریف نے فیصلہ کر رکھا ہے کہ وہ اپنے ضمیر کو جاگنے نہیں دے گا۔
میرا قلم بہک کر کشمیر سے نواز شریف کی طرف چلا گیا ہے۔ اور یہ شاید اس لئے ہوا ہے کہ یہ شخص اب داستانِ پارینہ بننے والا ہے۔
گذشتہ دنوں چیف جسٹس ثاقب نثار نے فرمایا کہ وہ آنے والی نسل کے لئے بہتر پاکستان چھوڑیں گے۔
انشاءاللہ ایسا ہی ہوگا۔۔
انشاءاللہ دوبارہ کبھی کسی کی ماں کی گود میں کوئی نواز شریف یا کوئی زرداری پیدا نہیں ہوگا۔
پاکستان اپنے حصے کے سارے دکھ جھیل چکا ہے۔۔۔۔۔

aj ni gal new logo

 

Scroll To Top