جب آ پ اپنے ملک کی بدقسمتیوں پر نظر ڈالتے ہیں تو کیا یہ سوال آپ کے ذہن میں نہیں ابھرتا ؟

aaj-ki-bat-logo

یہ ملک ایک لحاظ سے کس قدر بدقسمت ہے کہ اس کی حکومت باقی پوری ریاست کے ساتھ محاذ آراءہے ۔۔۔ حکومت سے مراد یہاں اس کی کابینہ ہے ۔۔۔ اور کابینہ سے مراد ایک ایسی جماعت ہے جس کی حیثیت ایک فرد کی ملکیت سے زیاد نہیں۔۔۔ ایک ایسا فرد جو چند ماہ قبل تک اس کا وزیراعظم تھا` جسے اس ملک کی اعلیٰ ترین عدالت کے اعلیٰ ترین پانچ ججوں نے صداقت اور امانت کی بنیادی خصوصیات سے عار ی اور کذاب یعنی جھوٹا قرار دے کر وزارت عظمیٰ کے عہدے سے فارغ کردیا تھا اور جس پرسنگین کرپشن کے متعدد کیسز میں مقدمات چل رہے ہیں۔۔۔

کیا یہ بدقسمتی نہیں کہ اس ملک کے سابق نااہل وزیراعظم کا سمدھی بھی جو اس کا وزیر خرانہ تھا کرپشن کے متعدد کیسز میں اب اشتہاری قرار پاچکا ہے ¾ اب تک کا بینہ کا ایک رکن ہے۔۔۔؟کیا یہ اس ملک کی بدقسمتی نہیں کہ اعلیٰ ترین عدلت سے خائن اور نااہل قرار پانے کے باوجود اس ملک کے سابق وزیراعظم کوہی اس ملک کا موجودہ وزیراعظم اصلی اور حقیقی حکمران سمجھتا ہے؟
کیا یہ اس ملک کی بدقسمتی نہیں کہ اس ملک کی حکمران جماعت نے اس ملک کی اعلیٰ ترین عدالت سے نا اہلی اور کذابی کی سند حاصل کرنے والے شخص کو بڑے فخر سے اپنا سربراہ منتخب کیا ہے۔۔۔؟
کیا یہ اس ملک کی بدقسمتی نہیں کہ اس ملک کی پارلیمنٹ نے ایک قانون منظور کیا ہے جس کی رُو سے سنگین جرائم میں ملوث ہونے والے شخص کو بھی کسی سیاسی جماعت کا سربراہ منتخب کیا جاسکتا ہے ؟
کیا یہ اس ملک کی بدقسمتی نہیں کہ اس ملک کی حکومت ملک کی اعلیٰ ترین عدالتوں پر نہ صرف یہ کہ کیچڑاچھال رہی ہے بلکہ یہ بھی کہ قانون کی حکمرانی کے عمل میں بھرپور رخنے ڈال رہی ہے (جس کا سب سے بڑا ثبوت یہ ہے کہ اس ملک کے سب سے بڑے احتسابی ادارے نیب کے ایسے احکامات کی کھلی خلاف ورزی کی جارہی ہے جن پر عملدرآمد کرنا اور کرانا حکومت کی ذمہ داری ہے ۔۔۔) ؟
کیا یہ اس ملک کی بدقسمتی نہیں کہ اس کی حکومت اس ملک کی فوج پر سنگین نوعیت کے الزامات لگا کر اپنے کالے کارناموں اور اپنی نااہلی پر پردہ ڈالنے کی کوشش کررہی ہے ؟
کیا یہ اس ملک کی بدقسمتی نہیں کہ جن افراد پر ملک کی بڑی عدالتوں میں سنگین الزامات میں مقدمات چل رہے ہیں اور جنہوں نے اپنی ضمانتیں کرا رکھی ہیں ان افراد کو ایسا پروٹوکول دے کر عدالتوں میں پہنچایا جاتا ہے جس پر دنیا کے بڑے بڑے حکمران بھی رشک کریں۔۔۔؟
آج کے پاکستان کی بدقسمتیوں کی داستان اس قدر طویل ہے کہ اسے قلمبند کرنے کے لئے صفحات در صفحات چاہئیں۔۔۔
جب ان بدقسمتیوں پر ہم غور کرتے ہیں تو ایک سوال ذہن میں اٹھے بغیر نہیں رہتا کہ جو لوگ آگے بڑھ کر اس ملک کے مقدر میں بدقسمتیاں لکھنے والوں کے ہاتھ پکڑ سکتے ہیں وہ خاموش تماشائی کیوں بنے ہوئے ہیں۔۔۔؟

Scroll To Top