جمہوریت کی پٹڑی پر صرف دو گاڑیاں! ایک میاں نواز شریف اور دوسری جناب آصف زرداری کی

سابق صدر پاکستان جناب آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ جمہوری حکومت کے خلاف غیر قانونی اقدام کی بھرپور مخالفت کریں گے اور جمہوریت کو کسی بھی صورت میں ”ڈی ریل“ (derail) نہیں ہونے دیں گے۔
انہوں نے یہ نہیں بتایا کہ وہ کس جمہوری حکومت کی بات کر رہے ہیں کیوں کہ ایک عرصے سے ان کا قیام یا تو دوبئی میں ہوتا ہے یا لندن میں۔ ان کا کاروبار عرب امارات میں بھی ہے اور برطانیہ میں بھی۔ گھر بھی دونوں ممالک میں ہیں۔
جہاں تک پاکستان کا تعلق ہے اس کے ساتھ زرداری صاحب کا تعلق بس اتنا رہ گیا ہے کہ اس کے ایک صوبے میں جس پارٹی کی حکومت ہے اس کے وہ شریک چیئرمین اور سی ای او یعنی چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیں۔ جس طرح میاں نواز شریف پاکستان مسلم لیگ (ن) کے چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیں۔
یہ بات یقینی ہے کہ دوبئی میں جمہوریت کبھی ڈی ریل نہیں ہو گی۔ اس لئے ڈی ریل نہیں ہو گی کہ وہاں جمہوریت کی پٹڑی بچھائی ہی نہیں گئی۔ پاکستان میں جمہوریت کی پٹڑی تو بچھی ہوئی ہے لیکن اس پر ہنوز جمہوریت کی گاڑی نہیں چلی۔ یہی وجہ ہے کہ ہمارے چیف جسٹس کو یہ کہنا پڑا ہے کہ یہاں جمہوریت کے نام پر عوام کے ساتھ مذاق ہو رہا ہے۔ اور مذاق کرنے والوںنے یہاں بادشاہت قائم کر رکھی ہے۔
کہناز رداری صاحب یہ چاہ رہے ہیں ”بھائی نواز ۔۔۔۔تُو میرا چاند میں تیری چاندنی ۔یا میں تیرا چاند تو میری چاندنی ۔ کوئی فکر نہ کر۔ ہم دینی بھائی ہیں۔ ساتھ جئیں گے ساتھ مریں گے۔ مرنا تو ہے ہی ….“
زرداری صاحب کا بیان پڑھ کر یوں ہی ایک شاندار خیال میرے ذہن میں آیا ہے کہ کیوں نہ ایک معتبر اور معزز کمیشن قائم کیا جائے جس کے تمام ارکان تمام سابق چیف جسٹس ہوں (حالیہ بھی) اور جس کا کام یہ ہو کہ فیلڈ مارشل ایو ب خان مرحوم ، جنرل یحییٰ خان مرحوم، ذوالفقارعلی بھٹو مرحوم ، جنرل ضیاءالحق مرحوم، محترمہ بے نظیر بھٹو مرحوم، میاں نواز شریف (بقیدِ حیات)، جناب آصف علی زرداری (بقیدِ حیات) اور جنرل پرویز مشرف (بقیدِ حیات ) کے ذاتی اور خاندانی اثاثوں کی چھان بین کر کے یہ معلوم کرنا ہو کہ اپنے دورِ اقتدار میں ہمارے کس کس حکمران نے کتنا کتنا اختیار اپنی اور اپنے خاندان کی دولت میں کتنا ، کتنا اضافہ کرنے کے لیے استعمال کیا۔
یہ کمیشن جن نتائج پر پہنچے گا اور جو معلومات قوم کے سامنے لائے گا اُن سے جمہوریت کی برکات اور فوجی آمریت کے نقصانات جاننے میں بڑی مدد ملے گی۔

Scroll To Top