فیصلہ آج؟

پانامہ کیس نواز شریف حسن نواز حسین نواز مریم نواز اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سپریم کورٹ نے اعلان کیا ہے کہ پاناما کیس کا گزشتہ ہفتے محفوظ کیے جانے والا فیصلہ جمعہ کو سنایا جائے گا۔سپریم کورٹ کے اعلامیے کے مطابق فیصلہ پاناما کیس کی سماعت کرنے والا پانچ رکنی لارجر بینچ صبح 11:30 بجے سنائے گا۔یاد رہے کہ پاناما کیس کی سماعت جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں پانچ رکنی لارجر بینچ نے کی تھی جس دیگر اراکین میں جسٹس اعجاز افضل خان، جسٹس گلزار احمد، جسٹس عظمت سعید اور جسٹساعجاز الاحسن شامل تھے۔ 21 جولائی کو عدالت عظمیٰ میں پاناما کیس کی سماعت مکمل ہوگئی تھی جس کے بعد عدالت نے فیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔پاناما کیس کی سماعت مکمل ہونے کے بعد جسٹس اعجاز افضل نے ریمارکس دیئے کہ پہلے ہی نااہلی کا معاملہ دیکھ رہے ہیں جبکہ جسٹس عظمت سعید نے کہا کہ گارنٹی دیتے ہیں وزیراعظم کی نااہلی کا جائزہ لیں گے جب کہ جسٹس اعجاز الاحسن کا کہنا تھا کہ اپنے فیصلے سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ سپریم کورٹ کے حکم پر 20 اپریل کو شریف خاندان کی منی ٹریل کی تحقیقات کے لیے جےآئی ٹی تشکیل دی گئی تھی جسے 60 روز میں اپنی تحقیقات مکمل کرنے کا حکم دیا گیا۔مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) نے 10 جولائی کو دس جلدوں پر مشتمل اپنی رپورٹ عدالت عظمیٰ میں جمع کروائی جس میں شریف خاندان کے معلوم ذرائع آمدن اور طرز زندگی میں تضاد بتایا گیا۔دوسری جانب پاناما کیس کا فیصلہ سنائے جانے کے وقت ریڈ زون میں سیکیورٹی ہائی الرٹ رہے گی۔سینئر سپرنٹنڈنٹ پولیس (ایس ایس پی) جمیل ہاشمی نے کہا کہ سپریم کورٹ کے اطراف میں پولیس کے علاوہ رینجرز اور فرنٹیئر کور (ایف سی) کے اہلکار بھی تعینات ہوں گے، جبکہ سپریم کورٹ میں رجسٹرار کی جانب سے جاری کیے گئے پاسز رکھنے والوں کو داخلے کی اجازت دی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ میڈیا نمائندوں کو بھی سپریم کورٹ کے ’پی آر او‘ کی جانب سے پاسز جاری کیے جائیں گے، جبکہ کسی غیر متعلقہ شخص کو ریڈ زون میں داخلے کی اجازت نہیں ہوگی۔

Scroll To Top