بلیاں بھی شیر بن گئیں!

kuch-khabrian-new-copy


رانا ثناءاللہ نے کہا ہے کہ اگر میجر جنرل آصف غفور کا ٹویٹ غلط فہمی پر مبنی نہیں تو ان کے خلاف کارروائی ہونی چاہئے۔ آپ کو یاد ہوگا کہ دو روز قبل ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے ٹویٹ کیا تھا کہ چونکہ فواد حسن فواد کا جاری کردہ خط ڈان لیکس کی رپورٹ سے کوئی مطابقت نہیں رکھتا اس لئے اسے مسترد کیا جاتا ہے۔ مسترد کرنے کا یہ عمل ظاہر ہے کہ میجر جنرل آصف غفور کا نہیں۔ وہ انٹر سروسز پبلک ریلیشنز کے ڈی جی اور تینوں افواج کے مشترکہ ترجمان ہیں۔ ان کا ٹویٹ براہ ِراست آرمی چیف کی منشا کا مظہر ہوتا ہے۔ مجھے یقین نہیں کہ رانا ثناءاللہ اس قدر ناسمجھ اور احمق ہیں کہ انہیں معلوم نہیں ہوگا کہ متذکرہ ٹویٹ دراصل آرمی چیف کا فیصلہ ہے ۔ اور اگر انہوں نے بالواسطہ طور پر یہ مطالبہ کیا ہے کہ آرمی چیف کے خلاف کارروائی کی جائے تو اس کا مطلب یہ ہوا کہ وہ اس وقت براہِ راست بھارتی حکومت کی ترجمانی کر رہے ہیں۔ جندال صاحب کے دورے کے بعد نون لیگی بلیاں بھی شیر بن گئی ہیں ۔میرے خیال میں ان” شیروں “ کو ”بلی“ بنانے کا وقت آگیا ہے۔

اقتدار کے تحفظ کے لئے میاں صاحب پاکستان کو داو¿ پر لگانے کا کوئی حق نہیں رکھتے۔

Scroll To Top