ہمارے ساتھ رہزنی ہمیشہ ہمارے رہبروں نے کی ہے

kuch-khabrian-new-copy

منافقت جھوٹ اور کرپشن کی بنیادوں پر کھڑی جمہوریت کے معمارو!!!
تم جیت گئے ۔۔ قوم ہار گئی۔
ہم نے امیدوں کے جو چراغ جلائے تھے وہ ایک ایک کر کے بجھ گئے ہیں۔ اگر آندھیاں چلتیں اور یہ چراغ بجھتے تو ہم سمجھتے کہ یہ منشائے الہٰی ہے۔ لیکن ان چراغوں کو بجھانے کے لئے آندھیوں کی ضرورت نہیں پڑی۔ جن سے ہمیں توقع تھی کہ ان چراغوں کی روشنی میں قوم کے لئے کوئی نیاراستہ۔ کوئی نئی منزل تلاش کریں گے۔۔۔۔انہوں نے خود پھونک مار کر انہیں بجھا دیا۔ ہمارے ساتھ رہزنی ہمیشہ ہمارے رہبروں نے کی ہے۔
لیکن اِ س جنگ کا یہ آخری باب نہیں۔ یہ جنگ ابھی ختم نہیں ہوئی۔ جس بطلِ جلیل کے دیئے ہوئے آئین کو نافذ کرنے کے لئے ہم نے یہ ملک بنایا تھا۔ ۔ اس کی حرمت کی قسم ہماری امیدوں کے چراغ بجھانے والوں کو ایک روز اپنے جرم کا حساب ضرور دینا پڑے گا۔۔

Scroll To Top