عراقی فورسزنے داعش کو پسپا کرکے موصل ایئرپورٹ کا کنٹرول حاصل کرلیا

فورسز کی جانب سے موصل کے مغربی حصے میں آپریشن کے دوران حاصل کردہ یہ سب سے بڑی کامیابی ہے،عراقی ٹی وی فوٹو:فائل

بغداد: عراق کی فوج  نے شدت پسند تنظیم داعش کے خلاف گھمسان کی لڑائی کے بعد موصل ایئرپورٹ اور اس سے متصل فوجی چھاؤنی پر کنٹرول حاصل کرلیا جب کہ اس دوران عراقی فورسز کو امریکی اسپیشل فورسز کی لاجسٹک اور دیگر امداد بھی حاصل رہی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق عراقی فورسز نے دعویٰ کیا ہے کہ گھمسان کی لڑائی کے بعد موصل شہر کے  مغربی حصے کے بعض علاقوں کا مکمل کنٹرول حاصل کرلیا جب کہ موصل ایئرپورٹ اور اس سے متصل ملٹری بیس کا بھی کنٹرول حاصل کر لیا گیا ہے۔ فوج کا کہنا ہے کہ لڑائی کے دوران داعش نے 2 عمارتوں کو خود ہی دھماکوں سے اڑا لیا جہاں بارود سے بھری گاڑیاں پارک کی گئی تھیں جنہیں خودکش حملوں میں استعمال کیا جانا تھا۔

دوسری جانب عراقی سرکاری ٹی وی کے مطابق کاؤنٹرٹیررازم سروس، ریپٹ ریسپونس فورسز اور فوج نے موصل ایئرپورٹ کا کنٹرول سنبھالتے ہوئے وہاں سرچ آپریشن شروع کردیا جب کہ ایئرپورٹ سے متصل غزلانی ملٹری کمپلیکس کا بھی مکمل طور پر کنٹرول حاصل کیا جاچکا ہے جب کہ فورسز کی جانب سے موصل کے مغربی حصے میں آپریشن کے دوران حاصل کردہ یہ سب سے بڑی کامیابی ہے۔

واضح رہے کہ داعش نے جون 2014 میں موصل پر چڑھائی کے دوران بغداد اور موصل کے درمیان ہائی وے پر قبضہ کرتے ہوئے سب سے پہلے ایئرپورٹ اور ملٹری کمپلیکس پر قبضہ  کرلیا تھا۔

Scroll To Top