مشکل کی گھڑی میں عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے: فردوس عاشق اعوان

ایمرجنسی کیش ٹرانسفر پروگرام میں میرٹ پر رقم دی جارہی ہے،سیالکوٹ میں روزانہ 1500 مستحقین کو رقم دینے کے انتظامات کیے گئے

سیالکوٹ (این این آئی)وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ مشکل کی اس گھڑی میں عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے،ایمرجنسی کیش ٹرانسفر پروگرام میں میرٹ پر رقم دی جارہی ہے،ہر غریب شخص اس پروگرام کا حقدار ہے،سیالکوٹ میں روزانہ 1500 مستحقین کو رقم دینے کے انتظامات کیے گئے ہیں،سیالکوٹ میں 32 ہزار 817 مستحقین اس پروگرام سے استفادہ حاصل کریں گے،احساس پروگرام کا( ڈیٹا بار بار ہیک ہوتا رہا، رقم کی تقسیم کے عمل میں شفافیت کو مدِنظر رکھا جارہا ہے،رقوم کی فراہمی میں کوئی سیاسی عمل دخل نہیں۔اتوار کومیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت نے ملکی تاریخ کا سب سے بڑا ایمرجنسی کیش ٹرانسفر پروگرام شروع کر دیا گیا ہے،حق دار کو اس کے حق کی فراہمی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ ملک بھر میں 13لاکھ 80ہزار خاندانوں میں 16ارب روپے سے زائد تقسیم ہو چکے ہیں۔ انہوں نے مسیحی برادری کو ایسٹر کی مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ کورونا کی وجہ سے ایسٹر کا تہوار سادگی سے منایا جا رہا ہے۔تمام عباد ت گاہوں میں ملکی ترقی کیساتھ کورونا کے خاتمے کیلئے دعائیں کی جا رہی ہیں۔انہوں نے کہاکہ ملک کی تعمیروترقی میں اقلیتی برادری کا کردار قابل ستائش ہے دریں اثنائبلاول کا بیان کورونا کے خلاف جنگ میں قومی یکجہتی کی فضا پارہ پارہ کرنے کے مترادف ہے۔ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھاکہ مستحقین کو رقوم کی فراہمی احساس پروگرام کا اہم جزو ہے۔انہوںنے کہاکہ رقوم کی فراہمی میں کوئی سیاسی عمل دخل نہیں۔ معاون خصوصی نے کہا کہ سیالکوٹ میں مستحقین میں 40کروڑ روپے تقسیم کیے جائینگے۔ انہوںنے کہاکہ سیالکوٹ میں 32817خاندان پروگرام سے مستفید ہونگے اوراب تک ملک بھر میں 13لاکھ 80ہزار خاندانوں میں 16ارب روپے سے زائد تقسیم ہو چکے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ ادائیگی مراکز پر کورونا سے بچاو¿ کیلئے حفاظتی اقدامات کی بھی ہدایت کی گئی ہے۔ان کا کہنا تھاکہ رقوم کی فراہمی کے عمل میں شفافیت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کر رہے ہیں،پروگرام میں بدعنوانی کی کوشش کرنیوالے 40افراد کے خلاف مقدمات درج کیے گئے ہیں۔اس پروگرام کا مقصد مستحق اور کمزور طبقوں کو تحفظ دینا ہے انہوںنے کہاکہ وزیراعظم نے مستحقین کی آسانی کیلئے وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کو ہدایات جاری کی ہیں۔اب بائیو میٹرک میچنگ کے ساتھ چہرے کی شناخت کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے،ای گورننس کے ذریعے شفافیت کو یقینی بنانے میں مدد ملتی ہے۔ معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہاآئندہ مرحلے میں دیہاڑی دار مزدوروں اور فیکٹری ورکرز کیلئے اقدامات ہونگے،ریاست پسماندہ طبقوں کی فلاح کیلئے پرعزم ہے،بڑھتی ہوئی آبادی ملک کو درپیش ایک اہم چیلنج ہے،بڑھتی ہوئی آبادی کے مقابلے میں وسائل بہت کم ہیں۔بنیادی ضرورتوں کی فراہمی ہر شہری کا حق ہے،ہمیں اپنے وسائل کو مد نظر رکھتے ہوئے فیصلے کرنے ہیں۔انہوں نے کہاکورونا کی روک تھام کیلئے وفاقی حکومت صوبوں سے مکمل تعاون کر رہی ہے۔

You might also like More from author