تمام محکموں میں ڈیجٹائزیشن کو متعارف کرا رہے ہیں: محمود خان

جدید دور کا تقاضا ہے کہ تمام سرکاری اُمور ڈیجٹل ہوں، سرکاری اُمور نمٹانے میں وقت کی بچت بھی ہو گی اور کارکردگی میں بھی مزید بہتری آسکے گی

پشاور(این این آئی)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے خیبرپختونخواحکومت کی ڈی جٹائزیشن کے عمل کیلئے لائحہ عمل مرتب کرنے کی ہدایت کی ہے اور کہا ہے کہ صوبائی حکومت تمام محکموں میں ڈیجٹائزیشن کو متعارف کرارہی ہے جو ڈیجٹل پاکستان اقدام کی طرف ایک اہم قدم ہو گا۔ اُنہوںنے کہاکہ تحریک انصاف کی حکومت تمام تر شعبہ جات میں اصلاحات متعارف کرا رہی ہے ، صوبے کے سرکاری اُمور کے روایتی اور فرسودہ نظام کو تبدیل کرکے ڈیجٹائزکرنے کیلئے اقدامات کر رہے ہیں ، جس سے سرکاری اُمور نمٹانے میں وقت کی بچت بھی ہو گی اور کارکردگی میں بھی مزید بہتری آسکے گی ۔ جدید دور کا تقاضا ہے کہ تمام سرکاری اُمور ڈیجٹل ہوں۔وہ وزیراعلیٰ ہاﺅس پشاور میں صوبائی حکومت کی ڈیجٹائزیشن لائحہ عمل کے حوالے سے اجلاس کی صدارت کر رہے تھے ۔ اجلاس میں چیف آف ڈیجٹل پاکستان وژن کمپین مس تانیہ ادریس ، وزیر خزانہ تیمور سلیم جھگڑا، وزیراعلیٰ کے مشیر برائے سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی ضیاءاﷲ بنگش ، چیف سیکرٹری کاظم نیاز، وزیراعلیٰ کے پرنسپل سیکرٹری شہاب علی شاہ ودیگر نے شرکت کی ۔ اجلاس کو خیبرپختونخوا حکومت کی ڈیجٹائزیشن حکمت عملی پر تفصیلی بریفینگ دی گئی ۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ روایتی سرکاری نظام کو ڈیجٹیل کرنے سے تمام تر سرکاری اُمور جدید ٹیکنالوجی کے اپلیکشن کے ذریعے نمٹائے جائیں گے جس سے دفاتر میں سرکاری اُمور کو کم وقت میں بہترین طریقے سے مکمل کیا جائے گا۔ ڈیجٹائزیشن سے محکموں میں تمام اُمور پیپر لیس ہوجائیں گے جبکہ سروس ڈیلیوری اور فیڈ بیک میں بھی بہتری آئے گی ۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ ڈیجٹائزیشن کا عمل مختلف فیزز میں مکمل کیا جائے گا۔ صوبائی حکومت کے اعلیٰ حکام کے دفاتر میںسمریز ، سرکاری خط و کتابت ، میمو ، آفس آرڈر اور دیگر تمام اُمور ڈیجٹائز کرنے سے عمل درآمد کو تیز تر کیا جاسکے گا۔ پہلے فیز میں تمام انتظامی سیکرٹریز اور محکموں کیلئے ڈیجٹائزیشن کا لائحہ عمل تیار کیا جارہا ہے جبکہ دوسرے فیز میں تمام صوبائی محکموں کی ڈیجٹائزیشن کیلئے روڈ میپ وضع کیا جائے گا۔ مزید بتایا گیاکہ پہلے دو فیزز کے لئے ڈیجٹائزیشن عمل کے پی آئی ٹی بورڈ کے ذریعے مقررہ ٹائم لائن کے اندر یقینی بنایا جائے گا۔ وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ جدید تقاضوں کے عین مطابق ہمیں ڈیجٹائزیشن کی طرف جانا ہے ، شعبہ آئی ٹی میں اصلاحات لانا وقت کی ضرورت ہے ، اُنہوںنے مزید کہاکہ پہلی فرصت میں وزیراعلیٰ سیکرٹریٹ کی ڈیجٹائزیشن کیلئے اقدامات ممکن بنائے جائیں گے تاکہ سرکاری اُمور نمٹانے میں وقت کا ضیاع نہ ہو۔ اُنہوںنے کہاکہ صوبہ خیبرپختونخوا کی ڈیجٹائزیشن اقدام باقی صوبوں کیلئے رول ماڈل ثابت ہو گا۔ ڈیجٹل پاکستان اقدام کو عملی جامہ پہنانے کیلئے صوبے میں ڈیجٹائزیشن حکمت عملی کو یقینی بنایا جائے گا۔

You might also like More from author