پناہ گاہوں کو بلا جواز تنقید کا نشانہ بنانا غریب دشمنی ہے:، فردوس عاشق اعوان

ڈان لیکس کے بانی ریاستی اداروں کے خلاف مصروف عمل رہے، آج ایسے لوگ لیکچر دے رہے ہیں کہ ملک کا دفاع کیسے کیا جائے

اسلام آباد (این این آئی)وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ (ن) لیگی ترجمانوں کا پناہ گاہوں کو بلا جواز تنقید کا نشانہ بنانا غریب دشمنی ہے، سخت سردی سے ٹھٹھرتے بے گھر افرادکیلئے سائباں کی دستیابی وزیراعظم عمران خان کے احساس کا مظہر ہے۔ پیر کو ایک بیان میں ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ (ن) لیگی ترجمانوں کا پناہ گاہوں کو بلا جواز تنقید کا نشانہ بنانا غریب دشمنی ہے۔ انہوںنے کہاکہ انہیں چاہئے کہ سردی سے ٹھٹھرتے بے گھروں کے بجائے لندن کی آرام دہ پناہ گاہوں پر تنقید کریں۔ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ نئے پاکستان کی بنیاد احساس پر رکھی گئی ہے۔ انہوںنے کہاکہ بے آسرا غریبوں کو چھت اور کھانا فراہم کرکے ریاست اپنی ذمہ داری پوری کر رہی ہے۔ انہوںنے کہاکہ انسانیت کی فلاح و خیر خواہی عمران خان کی زندگی کا نصب العین ہے۔ انہوںنے کہاکہ لٹیرالیگ کی قیادت پاکستانیوں کو غریب اور بےگھر کر کےایون فیلڈ کے پرآسائش محل میں لطف اٹھا رہے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ عمران خان ہمہ وقت معاشرے کے پسے ہوئے طبقات کی بھلائی کے لئے اقدامات کررہے ہیں۔ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ شریفین نے صرف اپنی آل اولاد اور ذات کا سوچا،عمران خان کی جدوجہد قوم کے بچوں کےروشن مستقبل کیلئے ہے۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے معاون خصوصی نے کہاکہ اکنامک، لیگل، سوشل اور پولیٹیکل ریفارمز لائی جا رہی ہیں، کچھ لوگوں کو حکومت سے باہر دو سال نہیں ہوئے لیکن بہت تڑپ رہے ہیں۔فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ ڈان لیکس کے بانی ریاستی اداروں کے خلاف مصروف عمل رہے، اللہ کی شان دیکھیں ایسے لوگ آج لیکچر دے رہے ہیں کہ ملک کا دفاع کیسے کیا جائے۔ فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ جن لوگوں کو مستعفی ہونا پڑا وہ ملکی سلامتی کے دفاع کا لیکچر دے رہے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ نیب کے بینیفشریز اور حقیقی گٹھ جوڑ کو متعارف کرانے والے نیب آرڈیننس ترامیم پر تنقید کر رہے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ اپوزیشن اپنے روائتی بیانیے پر نوحہ کناں نظر آرہی ہے، شرطیہ کہتی ہوں ان میں سے کسی نے وہ آرڈیننس پڑھا ہی نہیں۔ انہوںنے کہاکہ لیگی ترجمان وزیر اعظم پر کیچڑ اچھالنے کا کوئی موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیتے۔ انہوںنے کہاکہ آرڈیننس کو مدر آف این آر او کہنے والے جانتے این آر او کے بینیفشریز کون ہیں۔ فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ کرپشن میں ملوث افراد کو آرڈیننس میں کوئی ڈھیل نہیں دی گئی، آرڈیننس میں ایماندار لوگوں کو تحفظ فراہم کیا گیا ہے۔فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ جو پکڑا جاتا ہے وہ کہتا ہے انتقامی کارروائی ہے۔انہوںنے کہاکہ آج کل یہ ایف آئی اے کے حوالے سے بات کر رہے ہیں، ایف آئی اے کو آزاد کیا گیا ہے، پہلے ایف آئی اے کو اپنے گھر بلایا جاتا تھا۔فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ یہی تبدیلی ہے جو آپ کو ہضم نہیں ہو رہی، یہی نیا پاکستان ہے جس میں آپ کو اداروں کے سامنے پیش ہونا پڑتا ہے۔فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ قانون آزاد اور طاقتور ہوگیا ہے، قائداعظم نے برابر حقوق اور مواقع کی بات کی تھی۔ صحافی نے سوال کیاکہ قمر زمان کائرہ نے این آر او پلس کہا وہ کسے کہا، فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ جو جیلوں سے نکل کر ملک سے بھاگ گئے تھے پھر این آر او لے کر واپس آتے رہے وہ این آر او کو بہتر جانتے ہیں، این آر او لینے والے این آر او کی تعریف بہتر بتا سکتے ہیں

You might also like More from author