سیکیورٹی صرف حکمرانوں کی، ہم تو کیڑے مکوڑے ہیں‘ والد زینب

  • پولیس نے بچی کو ڈھونڈنے میں تعاون نہیں کیا‘ آرمی چیف اور چیف جسٹس سے نوٹس کی اپیل
سیکیورٹی صرف حکمرانوں کے لیے ہے اور ہم تو بس کیڑےمکوڑے ہیں، والد زینب فوٹو: ایکسپریس اسکرین گریب

سیکیورٹی صرف حکمرانوں کے لیے ہے اور ہم تو بس کیڑےمکوڑے ہیں، والد زینب فوٹو: ایکسپریس اسکرین گریب

اسلام آباد( سٹاف رپورٹر)قصور میں بربریت کا شکار ہونے والی ننھی زینب کے والد کا کہنا تھا کہ عام آدمی کے لیے کوئی تحفظ نہیں، سیکیورٹی صرف حکمرانوں کے لیے ہے ہم تو کیڑے مکوڑے ہیں جب کہ انصاف ملنے تک بیٹی کی تدفین نہیں کروں گا۔بیٹی کی تدفین نہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔عمرے کی ادائیگی کے بعد اسلام آباد پہنچنے پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے زینب کے والد نے کہا کہ پولیس نے بچی کو ڈھونڈنے میں تعاون نہیں کیا۔ اگر پولیس فوری طور پر کارروائی کرتی تو ملزمان گرفتار ہو جاتے۔انہوں نے کہا کہ جب تک ملزمان گرفتارنہیں ہوتے اس وقت تک بچی کی تدفین نہیں کریں گے۔زینب کے والد نے چیف جسٹس آف پاکستان سے واقعے کا نوٹس لینے اور آرمی چیف سے انصاف کی فراہمی کی اپیل بھی کی۔واضح رہے کہ قصور کے علاقے روڈ کوٹ سے چار روز قبل اغوائ کی جانے والی آٹھ سالہ بچی زینب کی لاش برا?مد کی گئی ہے۔ سفاک ملزمان نے زینب کو زیادتی کے بعد گلادباکر قتل کرنے کے بعد اس کی نعش کو کوڑے کے ڈھیر پر پھینک دیا۔واقعے کے خلاف اہل علاقہ نے شدید احتجاج کیا جبکہ علاقے میں کاروبار بند رہا۔ معصوم زینب کے والدین عمرہ کی سعادت کیلئے سعودیہ میں ہیں اور اپنی بچی کی موت پر غم سے نڈھال ہیں۔

Scroll To Top