مسلمان کبھی لبرل نہیں ہوسکتا !

aaj-ki-bat-logo

کوئی بھی مسلمان۔۔۔ اگر وہ واقعی مسلمان ہے تو وہ لبرل نہیں ہوسکتا۔۔۔
مسلمان عدل و انصاف کا علمبردار ہوتا ہے۔۔۔ مسلمان امن و ررواداری کا پیامبر ہوتاہے۔۔۔ مسلمان کے دل میں اپنے مسلمان بھائی کا ہی نہیں ` ہر اُس انسان کا درد ہوتا ہے جو تکلیف میں ہو۔۔۔اور جس پر ظلم ہورہا ہو۔۔۔ خواہ اس کا کوئی ہی مذہب کیوں نہ ہو۔۔۔
مگر مسلمان لبرل نہیں ہوسکتا۔۔۔
مسلمان نیکی اور بدی کے درمیان تمیز ختم نہیں کرسکتا۔۔۔ مسلمان ایک اللہ کو مانتا ہے جس کے علاوہ اور کوئی معبود نہیں۔۔۔ مسلمان کا ایمان ایک اللہ کی معبودیت اوراللہ کے ایک ایک فرمان۔۔۔ ایک ایک لفظ کی صداقت پر غیر متزلزل ایمان ہوتا ہے۔۔۔ مسلمان قرآن کو اللہ تعالیٰ کا آخری پیغام مانتا ہے۔۔۔ اور اس آخری پیغام کو بنی نوع انسان تک پہنچانے والے رجلِ عظیم ترین کو اللہ تعالیٰ کاآخری پیغمبر مانتا ہے۔۔۔
مسلمان کا ایمان ہوتا ہے کہ جو شخص بھی اللہ تعالیٰ کے آخری پیغام کے کسی ایک بھی حرف یا لفظ سے اختلاف رکھتا ہے۔۔۔ وہ دائرہ ءاسلام سے خارج ہے۔۔۔ مسلمان کبھی اللہ بھگوان او ر ایشور کو ایک نہیں سمجھ سکتا (نعوذ باللہ)۔۔۔ جس کلمے کو پڑھ کر مسلمان مسلمان بنتا ہے اس کے تو الفاظ ہی یہ ہیں کہ کوئی نہیں اللہ۔۔۔ اللہ کے سوا اور محمد ﷺ اللہ کے رسول ہیں۔۔۔ کوئی بھی مسلمان ایک مسلمان اور ایک غیر مسلم کے درمیان جو واضح فرق ہے اسے نظر انداز نہیں کرسکتا۔۔۔ مسلمان اس ” فرق“ کو تاحیات ماننے اور قائم رکھنے کا پابند ہے۔۔۔ مسلمان کبھی لبرل نہیں ہوسکتا!
رواداری اور لبرلزم میںزمین و آسمان کافرق ہے۔۔۔

Scroll To Top