نیب ریفرنسز حسن اور حسین نواز کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع

  • حسن، حسین نواز کی رہائشگاہ کے باہر عدالتی مطلوب ہونے کے نوٹس چسپاں،نیب ریفرنسز میں مطلوب ہونے کے نوٹس برطانیہ میں بھی ارسال
  • 30 روز کے اندر ملزما ن عدالت میں پیش نہ ہوئے تو ان کے دائمی وارنٹ گرفتاری جاری گئے جائیں گے جبکہ جائیداد قرقی کی کارروائی بھی شروع ہو جائےگی

نواز شریف فیملی

اسلام آباد( سٹاف رپورٹر) حسین نواز اور حسن نواز کو نیب ریفرنسز میں اشتہاری ملزم قرار دینے کی کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔ لاہور میں ان کے گھر کے باہر مطلوب ہونے کے نوٹسز چسپاں کر دیئے گئے ہیں جبکہ یہ نوٹسز برطانیہ بھی ارسال کر دیئے گئے ہیں۔ دونوں ملزمان 30 روز کے اندر احتساب عدالت کے سامنے پیش نہ ہوئے تو ان کے دائمی وارنٹ گرفتاری جاری کئے جائیں گے۔ نوٹسز احتساب عدالت کے باہر بھی چسپاں کر دیئے گئے ہیں۔ نوٹسز پاکستانی ہائی کمیشن کے ذریعے برطانیہ بھجوائے گئے ہیں اور کہا گیا ہے کہ لندن میں موجود ایون فیلڈ اپارٹمنٹ 16 اور 16 اے کے باہر یہ نوٹسز چسپاں کر دیئے جائیں۔ نوٹسز میں لکھا ہے کہ حسین نواز شریف اور حسن نواز شریف تین ریفرنسز میں مطلوب ہیں۔ ان کو گرفتار کرنے کے لئے وارنٹ بھی جاری کئے گئے مگر وہ پیش نہیں ہوئے۔ اب ان کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کی جا رہی ہے۔ 30 روز کے اندر ملزما ن عدالت میں پیش نہ ہوئے تو ان کے دائمی وارنٹ گرفتاری جاری گئے جائیں گے جبکہ جائیداد قرقی کی کارروائی بھی شروع ہو جائے گی جبکہ ملزمان کے اشتہاری ہونے کے حوالے سے اخباروں میں اشتہارات بھی دیئے جائیں گے۔واضح رہے کہ احتساب عدالت نے نیب ریفرنسز میں مسلسل عدم پیشی پر حسین اور حسن نواز کے دائمی ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے انہیں اشتہاری قراردیا تھا۔

Scroll To Top