نواز شریف کو ملک میں رہ کر نیب ریفرنسز کا سامنا کرنا چاہیے، خورشید شاہ

  • چیئرمین نیب کی تعیناتی کے حوالے سے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اب تک کوئی مشاورتی عمل شروع نہیں کیا
  • نیب نے بہت سے نام ای سی ایل میں ڈالے ¾ شریف خاندان کے معاملے میں نرمی برتی گئی ¾اپوزیشن لیڈر

خورشید شاہ

اسلام آباد(این این آئی)قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ نے کہاہے کہ سابق وزیر اعظم نوازشریف کو ملک میں رہ کر نیب ریفرنسز کا سامنا کرنا چاہئے کلثوم نواز کی بیماری کی آڑ میں ان کا وطن واپس نہ آنا غیرمناسب ہے۔ پیر کو میڈیا سے بات کرتے ہوئے پارلیمنٹ میں قائد حزب اختلاف خورشید شاہ نے کہا کہ نئے چیئرمین نیب کی تعیناتی کے حوالے سے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اب تک کوئی مشاورتی عمل شروع نہیں کیا جبکہ چیئرمین نیب کی ریٹائرمنٹ سے 3 ماہ قبل ہی مشاورتی عمل شروع ہوجانا چاہئے تھا اب اس حوالے سے میں خود سیاسی جماعتوں سے مشاورت کروں گا۔خورشید شاہ نے کہا کہ بیگم کلثوم نواز کی صحت کےلئے دعاگو ہیں لیکن نوازشریف کا کلثوم نواز کی بیماری کی آڑ میں بیرون ملک سے واپس نہ آنا غیر مناسب ہے، انہیں ملک میں رہ کر نیب ریفرنسز کا سامنا کرنا چاہئے۔ ہم چاہتے ہیں کہ تمام ادارے اپنے دائرہ کار میں رہ کر کام کریں، نیب نے بہت سے نام ای سی ایل میں ڈالے لیکن شریف خاندان کے معاملے میں نرمی برتی گئی۔

Scroll To Top