نیا کلبھوشن کون ہے؟]گوادرمیں مختلف مقامات پر دہشتگردوں کی فائرنگ،10 مزدور جاں بحق

  • بلوچستان میں ترقی شرپسندوں کی آنکھ میں کھٹکنے لگی‘را سے مالی مدد لینے والے پاکستان کی ترقی نہیں دیکھنا چاہتے،صوبائی وزیرداخلہ
  • مقتولین کا تعلق سندھ کے ضلع نوشہرو فیروز سے ہے ، حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب ‘،واقعے میں 2 افراد زخمی ہوئے، دہشت گردوں کی بزدلانہ کاروائیاں بلوچستان میں ترقی کا سفر نہیں روک سکتیں‘وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی
  • چیئرمین تحریک انصاف عمران خان، وزیراعلی بلوچستان ثنا اللہ زہری،وزیراعلی پنجاب شہبازشریف،امیر جماعت اسلامی سراج الحق سمیت دیگر تمام سیاسی جماعتوں کے گوادر میں مزدووں کے قتل کی مذمت کی

nine-laborers-killed-two-injured-in-gun-attack-at-gwadar-1494658110-9937

گوادر(مانیٹرنگ ڈیسک) گوادرمیں سڑک کی تعمیر کے دوران نامعلوم افراد کی فائرنگ سے 10 مزدور جاں بحق ہو گئے،پشکان اور گنز دو مختلف مقامات پر سڑک کی تعمیر کے دوران موٹر سائیکل سواروں نے اچانک اندھا دھند فائرنگ کر دی،فائرنگ کے نتیجے میں 8 مزدور موقع پر جاں بحق ہوگئے جبکہ 3 زخمی ہوگئے،زخمیوں کو ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں 2 مزید مزدور دم توڑ گئے،ہسپتال ذرائع کے مطابق ایک زخمی زیر علاج ہے،واقعے کے بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا ہے،جاں بحق مزدوروں کا تعلق سندھ کے علاقے کنڈیارو کے نواحی گاو¿ں محمد صدیق لاکھو سے ہے(باقی صفحہ نمبر 7بقیہ4
،قتل کیے گئے مزدوروں میں بشیراحمد،محمد آصف،رسول بخش،محمد حکیم،جاڑل،حضوربخش،کوڑل،عبدالوحید اور محکم لاکھو شامل ہیں،جاں بحق مزدور ایک ماہ قبل مزدوری کے لیے بلوچستان گئے تھے۔وزیر داخلہ بلوچستان میر سرفراز بگٹی نے مزدوروں کے قتل کی مذمت کرتے ہوئے کہا نہتے اور بے گناہوں کو نشانہ بنا کر دہشت گردوں نے اپنی بزدلی اور کمزوری ظاہر کی،دہشت گردوں کی بزدلانہ کاروائیاں بلوچستان میں ترقی کا سفر نہیں روک سکتیں،واقعہ میں ملوث عناصر کی گردنیں دبوچ لیں گے۔وزیراعلی بلوچستان ثنا اللہ زہری،وزیراعلی پنجاب شہبازشریف،امیر جماعت اسلامی سراج الحق سمیت دیگر سیاسی جماعتوں کے گوادر میں مزدووں کے قتل کی مذمت کی۔گوادر میں 2 مختلف مقامات پر نامعلوم افراد کی فائرنگ سے 10 مزدور جاں بحق اور دو زخمی ہوگئے ¾ حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے تاہم واقعہ کے فوری بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ ہفتہ کو بلوچستان کے ضلع گوادر کے علاقے گنت پیشکان میں نامعلوم افراد نے سڑک کی تعمیر میں مصروف مزدوروں پر فائرنگ کر کے 9 افراد کو جاں بحق اور دو کو زخمی کردیالیویز حکام کے مطابق مزدور ایک سڑک کی تعمیر میں مصروف تھے جب مسلح افراد نے انہیں فائرنگ کا نشانہ بنایا۔جاں بحق ہونے والے مزدوروں کی لاشوں اور زخمیوں کو ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال گوادر منتقل کیا گیا ¾ ہسپتال میں ایمرجنسی بھی نافذ کردی گئی ہے لیویز حکام کے مطابق فائرنگ کے بعد حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے ¾ مقتولین کا تعلق سندھ کے ضلع نوشہرو فیروز سے ہے۔صوبائی وزیر داخلہ سرفراز بگٹی نے کہا کہ دہشت گردوں نے پاکستانیوں کو شہید کیا ہے۔وزیرداخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی نے کہا کہ را سے مالی مدد لینے والے پاکستان کی ترقی نہیں دیکھنا چاہتے ¾وعدہ کرتا ہوں دہشت گردوں کو کیفرکردار تک پہنچائیں گے۔

Scroll To Top